Live Results Assembly Elections 2018

اگستا ویسٹ لینڈ: بچولیہ کرشچین مشل پانچ دن کی سی بی آئی حراست میں

پٹیالہ ہاوس میں واقع سی بی آئی کی خصوصی عدالت میں پیش کیا گیا۔ عدالت نے مشیل کو پانچ دنوں کی سی بی آئی حراست میں بھیج دیا۔

Dec 05, 2018 10:00 PM IST | Updated on: Dec 05, 2018 10:00 PM IST

نئی دہلی:  مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی) کی خصوصی عدالت نے اگستا ویسٹ لینڈ معاملے میں بچولیہ کرشچین مشل کو پانچ دنوں کی سی بی آئی حراست میں بھیج دیا ہے۔ مشل کومنگل کی رات دوبئی سے حوالگی کے ذریعہ ہندوستان لایا گیا تھا۔ اسے آج پٹیالہ ہاوس میں واقع سی بی آئی کی خصوصی عدالت میں پیش کیا گیا۔ عدالت نے مشیل کو پانچ دنوں کی سی بی آئی حراست میں بھیج دیا۔

سی بی آئی کی طرف سے عدالت میں پیش ہوئے وکیل ڈی پی سنگھ نے کہا کہ اس معاملے کی انکوائری ہورہی ہے اور وہ مشیل سے پوچھ گچھ کے لئے حراست چاہتے ہیں۔ مشیل کی حوالگی کی منظوری پچھلے ماہ ہی ملی تھی۔

اگستا ویسٹ لینڈ: بچولیہ کرشچین مشل پانچ دن کی سی بی آئی حراست میں

کرشچین مشل: فائل فوٹو

Loading...

مشیل کی طرف سے عدالت میں حاضر ہوئے وکیل الزو کے جوسف نے ضمانت کی عرضی دائرکی۔ عدالت نے اگلی سماعت تک ضمانت کی عرضی ملتوی کردی۔ عدالت نے وکیل کو مشیل سے صبح سے ایک گھنٹے اور شام کو ایک گھنے ملاقات کرنے کی اجازت دی ہے۔ اس دوران وہ موکل سے صلاح و مشورہ کرسکیں گے۔

یہ معاملہ اٹلی کی کمپنی اگستا ویسٹ لینڈ کے ساتھ ہیلی کاپٹر سودے سے متعلق ہے۔ مشیل پر الزام ہے کہ اس سودے میں اسے مبینہ رشوت کے طور پر سوا دو سو کروڑ روپے ملے ہیں۔ سی بی آئی نے اس سے منگل کی رات اپنے ہیڈکوارٹر میں پوچھ گچھ کی۔ اگستا ویسٹ لینڈ ہیلی کاپٹر کا سودا مرکز میں من موہن سنگھ کی قیادت والی متحدہ ترقی پسند اتحاد حکومت کے دور میں 2007میں ہوا۔

اس کے تحت مجموعی طورپر بارہ وی وی آئی پی ہیلی کاپٹر خریدنے کا سودا کیا گیا تھا۔ رشوت کا الزام لگنے پر چھ سال بعد ہیلی کاپٹر سودے کی خریداری کا معاہدہ منسوخ کردیا گیا تھا۔ سالہ مشیل کو انٹرپول کے نوٹس کے بعد گذشتہ سال گرفتار کیا گیا تھا۔ اسے ہندوستان لانے میں قومی سلامتی مشیر اجیت ڈوبھال کا اہم رول رہا۔  ڈوبال کی نگرانی میں ہی مشیل کی حوالگی کی کارروائی مکمل کی گئی۔

اس معاملے میں 2016 میں فضائیہ کے سابق سربراہ ایس پی تیاگی گرفتار بھی کئے جاچکے ہیں۔ فی الحال و ہ ضمانت پر ہیں۔ رافیل جنگی طیارہ سودے کے سلسلے میں اپوزیشن کے الزامات کا سامنا کررہی نریندر مودی حکومت کو مشیل کے حوالگی سے تھوڑی راحت ملنے کی امید ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز