اب الہ آباد کا نام بدل کر پریاگ کرنے کا مطالبہ ، اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد نے منظور کی قرار داد

Sep 11, 2017 11:26 PM IST | Updated on: Sep 11, 2017 11:27 PM IST

الہ آباد : اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد نےالہ آباد کا نام بدل کر پریاگ کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔ الہ آباد میں منعقدہ اکھاڑا پریشد کے ہنگامی اجلاس کے اختتام پرالہ آباد کا نام بدلنے کی قرار داد منظور کی گئی ۔ الہ آباد گنگا جمنی تہذیب کا مرکز ہے۔ یہاں بڑی تعداد میں ہندی و اردو کے ادیب پیدا ہوئے ہیں ۔ صوبے کا ہائی کورٹ بھی یہیں ہے ۔

خیال رہے کہ ریاست میں بی جے پی کی حکومت آنے کے بعد سے اکھاڑا پریشد جیسی تنظیموں کو کافی قوت حاصل ہوئی ہے، جس کی وجہ سے ان کو لگ رہا ہے کہ اس دور میں جو وہ فیصلہ لیں گے ، اس کو سرکار عمل میں لائے گی۔ ویسے وزیر اعلی بھی ایک ٹی وی چینل پر پرانے شہروں، سڑکوں، محلوں کے نام کی تبدیلی کی پرزور حمایت کر چکے ہیں۔ اس سے قبل سماج وادی پارٹی اور بی ایس پی کے درمیان شہروں کے نام کی تبدیلی کو لیکرکافی سیاست رہی ہے۔

اب الہ آباد کا نام بدل کر پریاگ کرنے کا مطالبہ ، اکھل بھارتیہ اکھاڑا پریشد نے منظور کی قرار داد

اکھاڑا پریشد کے صدر مہنت نریندر گری نے دعویٰ کیا کہ اس شہر کو الہ آباد کے نام سے بہت کم لوگ جانتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ الہ آباد کا نام بدل کر پریاگ کرنے کی قرار داد متفقہ طور سے منظور کی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ اس مطالبہ کوحکومت کے پاس بھیجا جا رہا ہے ۔

واضح رہے کہ الہ آباد کو مغل بادشاہ اکبر نے بسایا تھا ۔ مغلوں کو زمانے میں الہ آباد کو ریاست کا درجہ حاصل تھا ۔ الہ آباد کا کا نام بدل کر پریاگ کرنے کی مہم وشو ہندو پریشد لمبےعرصے سے چلارہی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز