انتخابات کے وقت بی جے پی نفرت کی افیون کی پڑیا لے کر چلتی ہے اور سب کو گمراہ کر دیتی ہے : اکھلیش یادو

Nov 17, 2017 04:01 PM IST | Updated on: Nov 17, 2017 04:01 PM IST

لکھنؤ: سماج وادی پارٹی (ایس پی) كے صدر اکھلیش یادو نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر عوام کو گمراہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے آج کہا کہ اس کے خلاف مهاگٹھ بندھن بن جائے تو ملک اور ریاست دونوں کا بھلا ہو جائے گا ۔ مسٹر اکھیلیش یادو نے یہاں صحافیوں سے کہا کہ انتخابات کے وقت بی جے پی نفرت کی افیون کی پڑیا لے کر چلتی ہے اور اسی سے سب کو گمراہ کر دیتی ہے۔ سب کو سمجھنا ہوگا کہ نفرت کی پڑیا سے خوشحالی نہیں آئے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ بی جے پی کے خلاف مهاگٹھ بندھن بننا چاہیے۔ اس سے نفرت پھیلانے والی سیاست کو روکنے میں مدد ملے گی۔

انہوں نے کہا کہ جس سوشل میڈیا نے بی جے پی کو خوب چڑھايا، اب وہی اسے ٹھیک کر رہی ہے۔ سوشل ميڈيا میں بی جے پی کے بارے میں سب کچھ بتایا جا رہا ہے۔ بی جے پی گجرات ماڈل سے ریاست کو ترقی دلانا چاہتی تھی لیکن اسی ماڈل کے استعمال کی وجہ سے ہر طرف افراتفری مچی ہوئی ہے۔

انتخابات کے وقت بی جے پی نفرت کی افیون کی پڑیا لے کر چلتی ہے اور سب کو گمراہ کر دیتی ہے : اکھلیش یادو

file photo

مسٹراکھیلیش یادو نے مائیکروسافٹ کے بانی بل گیٹس کی وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ سے ملاقات پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مسٹر گیٹس کا ادارہ اتر پردیش میں صحت کی سمت میں بہتر کام کر رہا ہے۔ خاص کر ایم ایم آر اور آئی ایم آرمیں تو یہ ادارہ بے مثال مدد کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اجودھیا میونسپل کے میئر کے عہدے پر لڑنے والے ایس پی امیدوار نے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کو پوری ریاست میں جلسے کرنے پر مجبور کر دیا۔ ان کا دعوی تھا کہ مسٹر یوگی کی ریلیوں میں بھیڑ نہیں ہو رہی ہے۔ اس کی خفیہ رپورٹ وزیر اعلی کے پاس بھی ہو گی۔ بھیڑ بھی کیوں ہو، سات آٹھ ماہ میں کوئی کام تو ہوا نہیں۔ صرف لوگوں کے درمیان نفرت پھیلانے کی کوشش کی گئی۔ جی ایس ٹی نے کاروبار کو چوپٹ کر دیا ہے۔ تاجروں کی حالت خراب ہے۔

بلدیاتی انتخابات کے لیے بی جے پی کی منشور کو انہوں نے چھلاوا بتاتے ہوئے کہا کہ زیادہ تر شہری اداروں پر بی جے پی کا قبضہ تھا لیکن صفائی وغیرہ کی حالت سب جانتے ہیں۔ عوام کو موقع ملا ہے، اب وہ اسے سبق سکھائيں گے۔ انہوں نے کہا کہ کسانوں کی مددگار ہونے کا دعوی کرنے والی بی جے پی حکومت میں کسان ہی زیادہ پریشان ہیں۔ کسانوں کے آلو کولڈ اسٹوریج میں سڑ رہے ہیں۔ انہيں گنے کی قیمت ادا نہیں ہو رہی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز