راجیہ سبھا رکنیت : شرد یادو کو اپنا موقف رکھنے کا پورا موقع دیا جانا چاہئے : علی انور انصاری

Sep 18, 2017 06:57 PM IST | Updated on: Sep 18, 2017 06:57 PM IST

نئی دہلی : جنتا دل یونائٹیڈ ( شرد گروپ) نے راجیہ سبھا کے چیئرمین ایم وینکیا نائیڈو سے مسٹر شرد یادو کی رکنیت پر جلدی میں کوئی فیصلہ نہیں کرنے کی درخواست کرتے ہوئے آج کہا کہ اس معاملے میں پارٹی کو اپنا موقف رکھنے کے لئے پورا موقع دیا جانا چاہئے۔ پارٹی کے سینئر لیڈر اور ممبر پارلیمنٹ علی انور انصاری نے یہاں پریس کانفرنس میں کہا کہ کہ انہیں پورا یقین ہے کہ مسٹر شرد یادو کو اپنا موقف رکھنے کیلئے پورا موقع دیا جائے گا اور اس معاملے میں بدیہی انصاف ملے گا۔ مسٹر علی انور انصاری نے اپنے وکیل کے ساتھ آج ہی راجیہ سبھا کے سکریٹری جنرل سے ملاقات کر کے مسٹر شرد یادو کا موقف رکھا۔

انہوں نے کہا کہ ابھی تک راجیہ سبھا کی ضابطہ اخلاق کمیٹی اور مراعات کمیٹی کا قیام نہیں ہوا ہے ، تو ایسے میں شرد یادو کو نااہل ٹھہرائے جانے کے معاملے میں جلد بازی کیوں کی جا رہی ہے؟ انہوں نے کہا کہ ایسے معاملے کو اصول کے تحت ضابطہ اخلاق کمیٹی کے پاس بھیجا جاتا ہے اور اس معاملے میں کئی قانونی پہلو بھی ہیں، اس لئے پارٹی کو اپنا موقف رکھنے کا موقع دیا جانا چاہیے۔

راجیہ سبھا رکنیت : شرد یادو کو اپنا موقف رکھنے کا پورا موقع دیا جانا چاہئے : علی انور انصاری

جے ڈی یو کے باغی راجیہ سبھا ایم پی علی انور انصاری نئی دہلی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے۔ فائل فوٹو

مسٹر انصاری نے کہا کہ چیئرمین نے حال ہی میں مسٹر شرد یادو کو نوٹس جاری کیا ہے اور پارٹی اس سلسلے میں ضروری دستاویزات مہیا کرا رہی ہے۔ پارٹی کے جنرل سکریٹری ارون شریواستو نے کہا ہے کہ بہت سی ایسی مثالیں ہیں جن میں اراکین کو نااہل ٹھہرائے جانے کے فیصلے میں مہینوں کا وقت لگا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز