یوگی کے وزیر پر ایس سی سرٹیفکیٹ لگا کر الیکشن جیتنے کا الزام ، ہائی کورٹ نے طلب کیا جواب

May 28, 2017 10:17 AM IST | Updated on: May 28, 2017 10:52 AM IST

الہ آباد : یوگی حکومت کے کابینہ وزیر ایس پی سنگھ بگھیل اپنے ذات کے سرٹیفکیٹ کو لے کر مشکل میں گھرتے نظر آ رہے ہیں ۔ ان پر غلط ذات سرٹیفکیٹ پیش کر کے ریزرو سیٹ سے الیکشن لڑنے کا الزام ہے ۔ بگھیل کے انتخاب کو اب الہ آباد ہائی کورٹ میں چیلنج کیا گیا ہے اور ان کا انتخاب منسوخ کر کے ٹںڈلا سیٹ پر نئے سرے سے الیکشن کرائے جانے اور بگھیل کے خلاف کارروائی کئے جانے کا مطالبہ کیا گیا ہے ۔

قابل ذکر ہے کہ ٹںڈلا سیٹ سے بی ایس پی کے ٹکٹ پر انتخاب لڑنے والے راکیش بابو کی عرضی پر سماعت کرتے ہوئے الہ آباد ہائی کورٹ نے ایس پی سنگھ بگھیل کو نوٹس جاری کیا ہے اور ان کو جواب دینے کے لئے چھ ہفتوں کا وقت دیا ہے ۔ عدالت اس معاملہ میں اب 18 اگست کو سماعت کرے گی ۔

یوگی کے وزیر پر ایس سی سرٹیفکیٹ لگا کر الیکشن جیتنے کا الزام ، ہائی کورٹ نے طلب کیا جواب

File Photo

خود کو پسماندہ طبقہ کا بتانے والے ایس پی سنگھ بگھیل نے چند ماہ قبل آگرہ سے ایس سی (دھنگر ذات ) کا سرٹیفکیٹ لیا اور اس سال اسمبلی انتخابات میں فیروز آباد ضلع کی ٹںڈلا ریزرو سیٹ سے الیکشن لڑ کر جیت درج کی ۔

وہیں الزام ہے کہ ایس سی کے لئے ریزرو سیٹ سے الیکشن لڑنے کے لئے ہی بگھیل نے خود کو دھنگر ذات کا بتایا ، جبکہ اس سے پہلے وہ خود کو بگھیل یعنی گنڈريا ذات کا بتا کر پسماندہ طبقہ کی سیاست کرتے تھے ۔ جسٹس وی شکلا کی بنچ نے اس معاملہ میں سماعت کے بعد ایس پی سنگھ بگھیل کو نوٹس جاری کیا ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز