جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مسلح تصادم، فوجی جوان شہید ، عام شہری زخمی، موبائل انٹرنیٹ خدمات منقطع

Nov 06, 2017 10:20 PM IST | Updated on: Nov 06, 2017 10:20 PM IST

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں جنگجوؤں اور سیکورٹی فورسز کے مابین جاری مسلح تصادم میں ایک فوجی اہلکار جاں بحق ہوگیا ہے۔ مسلح تصادم کے مقام پر احتجاجیوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین ہونے والی جھڑپوں میں ایک عام شہری گولی لگنے سے زخمی ہوا ہے۔ ضلع میں سیکورٹی وجوہات کی بناء پر موبائیل انٹرنیٹ خدمات منقطع کی گئی ہیں۔سرکاری ذرائع نے بتایا کہ پلوامہ کے کنڈی اگلر میں جنگجوؤں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر جموں وکشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ (ایس او جی)، فوج اور سی آر پی ایف نے مذکورہ علاقہ میں پیر کی شام تلاشی آپریشن شروع کیا۔ گاؤں کو محاصرے میں لینے کے دوران جنگجوؤں نے سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کی۔

سیکورٹی فورسز نے جوابی فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے مابین باضابطہ طور پر جھڑپ کا آغاز ہوا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ابتدائی فائرنگ میں فوج کا ایک اہلکار جاں بحق ہوگیا۔ اس دوران مقامی لوگوں نے سڑکوں پر نکل کر مسلح تصادم کے مقام کی طرف جانے کی کوشش کی۔

جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مسلح تصادم، فوجی جوان شہید ، عام شہری زخمی، موبائل انٹرنیٹ خدمات منقطع

ہندوستان کے سرجیکل اسٹرائک سے بہت سے دہشت گردوں کی موت کی اطلاعات ہیں، لیکن ابھی تک اس کی سرکاری طور پر تصدیق نہیں کی گئی ہے۔

تاہم سیکورٹی فورسز نے ان کو روکنے کے لئے آنسو گیس کے ساتھ ساتھ مبینہ طور پر فائرنگ بھی کی جس کے نتیجے میں ایک احتجاجی نوجوان سینے میں گولی لگنے سے زخمی ہوا۔ زخمی نوجوان کو مقامی اسپتال سے سری نگر منتقل کیا گیا ہے۔ اس کی حالت تشویش ناک بتائی جارہی ہے۔ ذرائع نے بتایا ’آخری اطلاعات ملنے تک مسلح تصادم جاری تھا‘۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز