گجرات اسمبلی انتخاب کے بعد ہوگا پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس ، مرکزی وزیر خزانہ ارون جیٹلی کا اشارہ

Nov 22, 2017 05:39 PM IST | Updated on: Nov 22, 2017 05:39 PM IST

نئی دہلی: پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں تاخیر کے سلسلے میں اپوزیشن کی طرف سے کئے جانے والے ہنگامہ کے درمیان وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے آج واضح اشارہ دیا کہ یہ اجلاس گجرات اسمبلی انتخابات کے بعد ہوں گے اور یہ مکمل طور پر باقاعدہ سیشن ہوں گے۔مسٹر جیٹلی نے یہاں کابینہ کے اجلاس کے بعد نامہ نگاروں کے سوالات کے جواب میں کہا کہ پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس اور اسمبلی انتخابات ایک ساتھ نہیں ہوں گے۔ انہوں نے کہا، ’’ہم اس بات کو یقینی کر رہے ہیں کہ پارلیمنٹ کا یہ سیشن باقاعدگی سے ہو لیکن ہم یہ بھی یقینی بنائیں گے کہ پارلیمنٹ سیشن اور انتخابات کی تاریخوں ایک ساتھ نہ پڑیں‘‘۔

انہوں نے کہا کہ وہ واضح کرنا چاہتے ہیں کہ جمہوریت میں انتخابات کے وقت عوام کو خطاب کیا جاتا ہے اسی لیے پہلے بھی انتخابات کی وجہ سے پارلیمنٹ سیشن کی تاریخیں آگے پیچھے ہوتی رہی ہیں اور سیشن کے بیچ تعطیل کرکے اسے دو مراحل میں بھی کیا جاتا رہا ہے ۔ ایک دیگر سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اس انتخاب میں بی جے پی کا بہت کچھ داؤ پر لگا ہوا ہے اور ہمیں عوام کے پاس تشہیری مہم کے لئے جانا ہے اپوزیشن کا پتہ نہیں کہ اسے جانا ہے یا نہیں جانا ہے۔

گجرات اسمبلی انتخاب کے بعد ہوگا پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس ، مرکزی وزیر خزانہ ارون جیٹلی کا اشارہ

مرکزی وزیر خزانہ ارون جیٹلی ۔ فائل فوٹو

واضح رہے کہ گزشتہ کچھ عرصے سے پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس کے وقت کو لے کر قیاس آرائی کی جا رہی تھی کہ یہ گجرات اسمبلی انتخابات کے بعد یا اس سے پہلے ہوں گے۔ اہم اپوزیشن پارٹی کانگریس حکومت پر الزام لگا رہی ہے کہ وہ گجرات اسمبلی انتخابات کو دیکھتے ہوئے پارلیمنٹ کا سیشن ٹال رہی ہے اور اپنی ذمہ داری سے بھاگ رہی ہے۔ جبکہ بھارتیہ جنتا پارٹی کا کہنا ہے کہ پارلیمانی اجلاس کے پہلے بھی انتخابات کے پیش نظر بعد میں کئے جا تے رہے ہیں لیکن اب مسٹر جیٹلی کے بیان سے واضح ہو گیا ہے کہ پارلیمنٹ کے موسم سرما کے اجلاس گجرات اسمبلی کے انتخابات کے بعد منعقد ہوں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز