دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کو بڑا جھٹکا ، ڈی ڈی سی اے ہتک عزت کیس میں الزامات طے

عدالت نے ہتک عزت کے اس معاملہ میں عام آدمی پارٹی کے پانچ دیگر لیڈروں کے اعتراف نہیں کرنے پر ان کے خلاف بھی الزامات طے کئے ہیں

Mar 25, 2017 05:43 PM IST | Updated on: Mar 25, 2017 06:25 PM IST

نئی دہلی: دہلی کی پٹیالہ ہاؤس عدالت نے دہلی ڈسٹرکٹ کرکٹ ایسوسی ایشن (ڈی ڈی سی اے) کیس میں مرکزی وزیر خزانہ ارون جیٹلی کی طرف سے دائر ہتک عزت کے مقدمہ میں وزیر اعلی اروند کیجریوال خلاف فرد جرم عائد کردی ہے ۔ چیف میٹروپولیٹن مجسٹریٹ سمیت داس نے مسٹر کیجریوال اور عام آدمی پارٹی کے دیگر رہنماؤں پر آج فردجرم عائد کرتے ہوئے اگلی سماعت کی تاریخ 20 مئی طے کی ہے۔

مسٹر جیٹلی نے ڈی ڈی سی اے میں مالی بے ضابطگیوں کا الزام لگانے پر مسٹر کیجریوال اور ان کے پانچ دیگر ساتھیوں پر مجرمانہ ہتک عزت کا مقدمہ درج کراتے ہوئے 10 کروڑ روپے کا دعوی کیا ہے۔ اس معاملے میں دوسرے ملزمان میں عام آدمی پارٹی لیڈر سنجے سنگھ، کمار وشواس، آشوتوش، دیپک واجپئی اور راگھو چڈھا شامل ہیں۔

دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کو بڑا جھٹکا ، ڈی ڈی سی اے ہتک عزت کیس میں الزامات طے

مرکزی وزیر خزانہ کا کہنا ہے کہ مسٹر کیجریوال نے ان پر جھوٹے اور انکی ساکھ کو نقصان پہنچانے والے الزامات لگائے ہیں جس سے ان کی شبیہ پر اثر پڑا ہے ۔ وزیر خزانہ 13 سال تک ڈي ڈی سی اے کے صدر رہے اور 2013 تک اس عہدے پر تھے۔ مسٹر کیجریوال اور انکی پارٹی کے رہنماؤں کا الزام تھا کہ مسٹر جیٹلی اور ان کے خاندان نے ڈي ڈی سی اے میں مالی بے ضابطگیاں کی تھیں۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز