جنوبی کشمیر میں بینک ڈکیتی کا ایک اور واقعہ ، نامعلوم بندوق بردار 4 لاکھ روپے لوٹ کر فرار

رواں برس کے 19 جنوری کو نامعلوم لٹیروں نے دوران شب جنوبی کشمیر کے اننت ناگ کے مومن آباد علاقہ میں نصب اے ٹی ایم مشین اڑا لی جس میں 14 لاکھ 56 ہزار روپے کی نقدی موجود تھی۔

May 03, 2017 05:13 PM IST | Updated on: May 03, 2017 05:13 PM IST

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں بدھ کے روز تین نامعلوم بندوق برداروں نے علاقائی دیہاتی بینک کی ایک شاخ سے 4 لاکھ روپے سے زائد روپے مالیت کی نقدی لوٹ لی۔ یہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران جنوبی کشمیر میں کسی علاقائی دیہاتی بینک میں ڈکیتی کا دوسرا واقعہ ہے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ بدھ کی دوپہر کو تین نامعلوم بندوق برداروں نے ضلع پلوامہ کے وہی بگ علاقہ میں واقع علاقائی دیہاتی بینک کی شاخ میں داخل ہوکر وہاں سے بندوق کی نوک پر 4 لاکھ روپے سے زائد کی رقم لوٹ لی۔

انہوں نے بتایا کہ پولیس نے موقع پر تلاشی کاروائی شروع کی ہے۔ خیال رہے کہ دو نامعلوم نقاب پوش بندوق برداروں نے کل (منگل کے روز) جنوبی ضلع کولگام کے یاری پورہ علاقہ میں واقع علاقائی دیہات بینک کی شاخ میں داخل ہوکر وہاں سے 65 ہزار روپے مالیت کی نقدی لوٹ لی۔ مرکزی حکومت کی جانب سے پانچ سو اور ایک ہزار روپے کے کرنسی نوٹوں پر پابندی عائد کئے جانے کے بعد جموں وکشمیر میں بینک ڈکیتی کے کم از کم ایک درجن واقعات پیش آئے ہیں۔ان میں سے بیشتر واقعات جنوبی کشمیر کے چار اضلاع میں پیش آئے ہیں۔

جنوبی کشمیر میں بینک ڈکیتی کا ایک اور واقعہ ، نامعلوم بندوق بردار 4 لاکھ روپے لوٹ کر فرار

photo : ANI

گزشتہ برس 21 نومبر کو نامعلوم مسلح افراد نے وسطی کشمیر کے ضلع بڈگام کے چرار شریف علاقہ میں ایک جے اینڈ کے بینک برانچ سے 12 لاکھ روپے لوٹ لئے ۔ 23 نومبر کو نامعلوم لٹیروں نے صوبہ جموں کے پہاڑی ضلع کشتواڑ کے سرتھال علاقہ میں واقع جموں وکشمیر بینک کی ایک شاخ سے 34 لاکھ اور 90 ہزار روپے کی رقم لوٹ لی۔ 8 دسمبر کو نامعلوم مسلح افراد نے ضلع پلوامہ میں جموں وکشمیر بینک برانچ آری ہال سے دس لاکھ روپے لوٹ لئے ۔ 15 دسمبر کو چار مسلح افراد کے ایک نقاب پوش گروپ نے ضلع پلوامہ کے رتنی پورہ میں واقع جموں وکشمیر بینک برانچ میں داخل ہوکر گیارہ لاکھ روپے کی رقم لوٹ لی۔

رواں برس کے 19 جنوری کو نامعلوم لٹیروں نے دوران شب جنوبی کشمیر کے اننت ناگ کے مومن آباد علاقہ میں نصب اے ٹی ایم مشین اڑا لی جس میں 14 لاکھ 56 ہزار روپے کی نقدی موجود تھی۔ 16 فروری کو نامعلوم مسلح افراد نے جے کے بینک شاخ ترکہ وانگن (شوپیان) سے تین لاکھ روپے سے زیادہ کی رقم لوٹ لی۔ 19 اپریل کو چار نامعلوم مسلح افراد نے جموں وکشمیر بینک شاخ حرمین (شوپیان) میں داخل ہوکر قریب 12 لاکھ روپے لوٹ لئے ۔ قابل ذکر ہے کہ مرکزی سرکار نے نومبر کے مہینے میں وادی میں ہونے والی بینک ڈکیتیوں پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے ریاستی پولیس کو بینک شاخوں کو تحفظ دینے کے لئے کہا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز