صدارتی امیدوار کے نام پر بات چیت کے لیے بی جے پی پارلیمانی بورڈ کی میٹنگ

Jun 19, 2017 01:57 PM IST | Updated on: Jun 19, 2017 03:41 PM IST

نئی دہلی۔  صدر کے عہدہ کا امیدوار طے کرنے کے لیے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پارلیمانی بورڈ کی آج یہاں میٹنگ ہو رہی ہے۔ بی جے پی ہیڈ کوارٹر میں ہو رہی اس میٹنگ میں پارٹی صدر امت شاہ اور وزیر اعظم نریندر مودی بھی موجود ہیں ۔ صدر جمہوریہ کے انتخاب کے لیے کاغذات نامزدگی داخل کرنے کا عمل 14 جون کو شروع ہو چکا ہے اور 28 جون اس کی آخری تاریخ ہے۔ 17 جولائی کو انتخاب ہونا ہے۔

صدر جمہوریہ کے عہدے کے امیدوار کیلئے مختلف سیاسی پارٹیوں کے درمیان اتفاق رائے پیدا کرنے کے لئے حکمراں پارٹی ہونے کے ناطے بی جے پی صدر نے پارٹی کے سینئر رہنما ؤں راجناتھ سنگھ، ایم وینکيا نائیڈو اور ارون جیٹلی کی تین رکنی کمیٹی تشکیل دی ہے۔

صدارتی امیدوار کے نام پر بات چیت کے لیے بی جے پی پارلیمانی بورڈ کی میٹنگ

کمیٹی کے ارکان نے اس سلسلے میں کانگریس صدر سونیا گاندھی، مارکسی کمیونسٹ پارٹی کے جنرل سکریٹری سیتا رام یچوری اور کمیونسٹ پارٹی، بہوجن سماج پارٹی، سماجوادی پارٹی اور کچھ دیگر پارٹیوں کے رہنماؤں سے الگ الگ بات چیت کی ہے، لیكن ان ملاقاتوں میں بی جے پی کی طرف سے صدرجمہوریہ کے عہدے کے امیدوار کے لیے کوئی نام پیش نہیں کیا گیا۔

بی جے پی صدر نے کل ممبئی میں اس سلسلے میں اپنی اتحادی پارٹی شیوسینا کے سربراہ ادھو ٹھاکرے سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی، لیکن اس میں بھی کوئی اتفاق رائے قائم نہیں ہوسکا۔ مسٹر ٹھاکرے صدارتی امیدوار کیلئے راشٹریہ سویم سیوک سنگھ کے سربراہ موہن بھاگوت کے نام کی سفارش کر چکے ہیں۔ انہوں نے کہا تھا کہ اگر مسٹر بھاگوت کے نام پر کسی کو اعتراض ہو تو معروف سائنس داں ایم ایس سواميناتھن كو امیدوار بنایا جائے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز