ضمنی انتخابات : یوپی اور اروناچل میں بی جے پی ، مغری بنگال میں ٹی ایم سی اور تمل ناڈو میں دیناکرن کامیاب

Dec 24, 2017 05:45 PM IST | Updated on: Dec 24, 2017 05:45 PM IST

نئی دہلی : چار ریاستوں کی پانچ اسمبلی سٹیوں پر ہوئے ضمنی انتخابات میں بی جے پی نے تین ، ترنمول کانگریس نے ایک سیٹ پر کامیابی حاصل کرلی ہے جبکہ تمل ناڈو میں ہوئے ضمنی انتخاب میں ٹی ٹی وی دیناکرن نے جیت حاصل کی ہے۔ مغربی بنگال میں سبانگ سیٹ ، اترپردیش میں سکندر، اروناچل پردیش میں پکے کیسانگ اور لیکا بلی جبکہ تمل ناڈو میں رام کرشن نگر سیٹوں پر ضمنی انتخابات ہوئے ہیں۔

اترپردیش کے سکندر ضمنی الیکشن میں بی جے پی کے امیدوار اجیت پال نے ایس پی کے اپنے قریبی حریف امیدوار کو تقریبا 11 ہزار ووٹوں سے شکست دی ۔ مغربی بنگال کے سبانگ سیٹ پر ٹی ایم سی کی امیدوار گیتا رانی بھوئیاں نے اپنے قریبی حریف امیدوار کو 64192 ووٹوں سے ہرایا ۔ اروناچل پردیش میں لیکابلی میں بی جے پی امیدوار کاردو نگوئر نے 2908 ووٹوں سے جیت درج کی ۔ اروناچل کی ہی دوسری سیٹ پکے کیسانگ سے بھی بی جے پی کے امیدوار بی آر وہاگے نے 475 ووٹوں سے کامیابی حاصل کی ۔ جبکہ تمل ناڈو میں جے للتا کے بھتیجے اور آزاد امیدوار ٹی ٹی وی دیناکرن نے اے آئی اے ڈی ایم کے امیدوار کو 40 ہزار سے زائد ووٹوں سے ہرایا۔

ضمنی انتخابات : یوپی اور اروناچل میں بی جے پی ، مغری بنگال میں ٹی ایم سی اور تمل ناڈو میں دیناکرن کامیاب

اروناچل پردیش میں 2014 میں کامینگ دولو کے الیکشن کو گوہاٹی ہائی کورٹ نے کالعدم قرار دیا تھا جسکے بعد پاکے کیسانگ سیٹ ہوگئی ہوگئی تھی ۔ جبکہ ریاست کے وزیر صحت جومدے کینا کی موت کی وجہ سے لیکابلی سیٹ خالی ہوئی تھی۔

اترپردیش میں سکندر اسمبلی حلقہ اٹاوہ لوک سبھا حلقہ کی پانچ اسمبلی نشستوں میں سے ایک ہے اور یہ سیٹ بی جے پی ایم ایل اے متھرا پرساد پال کے انتقال کی وجہ سے خالی ہوگئی تھی۔جبکہ مغربی بنگال میں یہ سیٹ مانس بھوئیاں کے راجیہ سبھا میں چلے جانے کی وجہ سے خالی ہوئی تھی ۔ مانس بھوئیاں پچھلے سال کانگریس کے ٹکٹ پر یہاں سے الیکشن جیتے تھے ، مگر اس کے بعد وہ ترنمول میں شامل ہوگئے تھے اور پھر ترنمول نے انہیں راجیہ سبھا بھیج دیا تھا۔ تمل ناڈو میں آر کے نگر سیٹ کیلئے ضمنی الیکشن ہوا تھا ۔ یہ سیٹ ریاست کی سابق وزیر اعلی جے للتا کے انتقال کی وجہ سے خالی ہوگئی تھی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز