معین قریشی کی مدد کے الزام میں سی بی آئی کے سابق سربراہ کے خلاف مقدمہ

Feb 20, 2017 11:11 PM IST | Updated on: Feb 20, 2017 11:13 PM IST

نئی دہلی : سی بی آئی نے گوشت ایكسپورٹر معین قریشی کی مدد کرنے کے الزام میں اپنے ہی سابق سربراہ امر پرتاپ سنگھ کے خلاف مقدمہ درج کیا ہے۔ سی بی آئی کی ٹیم نے پیر کو ان کے گھر پر چھاپہ ماری کی۔

سی بی آئی کے ذرائع کے مطابق قریشی، ان کے ملازم آدتیہ شرما، ٹرائی میکس کمپنی گروپ کے مالک پردیپ كونیرو اور دیگر نامعلوم افراد کے خلاف بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ ایجنسی نے چار شہروں نئی ​​دہلی، غازی آباد، چنئی اور حیدرآباد میں چھاپہ ماری کی۔

معین قریشی کی مدد کے الزام میں سی بی آئی کے سابق سربراہ کے خلاف مقدمہ

بیوروکریٹس کا تعاون لینے کے لئے قریشی پر کئی لوگوں سے دولت حاصل کرنے کا الزام ہے۔ ای ڈی کی شکایت پر ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ جن جگہوں پر چھاپہ ماری کی گئی ہے، ان میں قریشی کا ایک ملازم، اس کی کمپنی، سنگھ کی رہائش گاہ اور حیدرآباد میں پردیپ كونیرو کی رہائش گاہ شامل ہے۔

وائی ​​ایس آر کانگریس کے لیڈر جگن موہن ریڈی کے خلاف آمدنی سے زیادہ جائیداد معاملے میں بھی سی بی آئی كونیرو کی جانچ کر رہی ہے۔ سال 1974 بیچ کے آئی پی ایس افسر اے پی سنگھ 30 نومبر 2010 سے 30 نومبر 2012 کے درمیان ایجنسی کے سربراہ تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز