سی بی ایس ای جاری رکھے گا ماڈریشن پالیسی ، سپریم کورٹ نہ جانے کا فیصلہ ، نتائج کی تاریخ کا آج اعلان

May 26, 2017 11:55 AM IST | Updated on: May 31, 2017 04:35 PM IST

نئی دہلی : سی بی ایس ای بورڈ امتحان کے نتائج اب کبھی بھی آ سکتے ہیں ، کیونکہ ماڈریشن پالیسی پر تذبذب اب ختم ہوگیا ہے۔ سی بی ایس ای نے ماڈریشن پالیسی کو لے کر سپریم کورٹ نہ جانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ماڈریشن پالیسی کی وجہ سے سی بی ایس ای بورڈ کے نتائج کے اعلان میں تاخیر ہو رہی تھی۔

سی بی ایس ای کی ترجمان ریما شرما نے بتایا کہ ہائی کورٹ کے فیصلہ کو تسلیم کرتے ہوئے سی بی ایس ای ماڈریشن پالیسی کے تحت نتائج کا اعلان کرنے جا رہی ہے۔ اب طالب علموں کو اضافی پوائنٹس کا فائدہ ملے گا۔ جمعہ کی شام کو سی بی ایس ای نتائج کی تاریخ کا بھی جاری کر دے گا۔

سی بی ایس ای جاری رکھے گا ماڈریشن پالیسی ، سپریم کورٹ نہ جانے کا فیصلہ ، نتائج کی تاریخ کا آج اعلان

ماڈریشن پالیسی پر ہائی کورٹ کے فیصلہ کے بعد سی بی ایس ای نے اس معاملہ میں ایڈیشنل سالسٹر جنرل سنجے جین سے مشورہ طلب کیا تھا۔ ہائی کورٹ کے حکم کے بعد سی بی ایس ای کے صدر آر کے چترویدی سنجے جین سے ملے تھے۔ سالسٹر جنرل نے سی بی ایس ای کو آگے اپیل دائر نہ کرنے کا مشورہ دیا ہے۔

ایڈیشنل سالیسٹر جنرل سنجے جین نے کہا کہ ہم ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف کوئی عرضی داخل نہیں کر رہے ہیں۔ میرا مشورہ ہے کہ اپیل نہیں کریں اور ہائی کورٹ کے حکم کا احترام کریں ، جسے انسانی وسائل کی وزارت اور سی بی ایس ای کے صدر نے قبول کر لیا ہے۔

خیال رہے کہ کئی دنوں سے سی بی ایس ای بورڈ امتحانات کے نتائج کو لے کر تذبذب کی صورتحال تھی۔ سی بی ایس ای اپنی ماڈریشن پالیسی کو ختم کرنا چاہتا تھا جبکہ ہائی کورٹ نے اس سال پالیسی کو برقرار رکھنے کا حکم دیا تھا۔ ہائی کورٹ کا کہنا تھا کہ پالیسی اگلے سال سے ہٹا ئی جا سکتی ہے۔

اس تذبذب کی وجہ سے طلبہ اور سرپرستوں میں کالج میں داخلہ کو لے کر بھی تشویش پائی جارہی تھی ،کیونکہ زیادہ تر كورسیز میں داخلہ عمل اس وقت تک شروع ہو جاتا ہے۔ تاہم امتحان کے نتائج کی صورتحال کو دیکھتے ہوئے دہلی یونیورسٹی نے داخلہ کی تاریخ آگے بڑھانے کے اشارے بھی دیے تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز