طبی رپورٹ میں تصدیق: چھیڑخانی کے وقت شراب کے نشے میں تھا بی جے پی لیڈر کا بیٹا

Aug 09, 2017 12:56 PM IST | Updated on: Aug 09, 2017 12:56 PM IST

چندی گڑھ ۔ چندی گڑھ میں آئی اے ایس افسر کی بیٹی سے چھیڑ چھاڑ کے دوران دونوں ملزم نشے میں تھے۔ اس بات کی تصدیق طبی رپورٹ میں ہو گئی ہے۔ دونوں ملزمان میں ایک وکاس برالا ہے۔ وہ ہریانہ بی جے پی ریاستی صدر کا بیٹا ہے۔ چندی گڑھ آئی جی ٹی لوتھرا کے مطابق، واقعہ کے بعد پولیس وکاس برالا اور اس کے دوسرے ساتھی کو میڈیکل کے لئے ہسپتال لے کر گئی تھی، لیکن انہوں نے بلڈ اور يورین سیمپل دینے سے انکار کر دیا تھا۔

ایسے میں ڈاکٹر نے آبزرویشن کی بنیاد پر میڈیکل تیار کیا جس میں شراب پینے کی تصدیق ہوئی ہے۔ لوتھرا نے بتایا کہ ملزمان کا بلڈ اور يورین نمونے نہ دینا ان کے خلاف جاتا ہے۔ انہوں نے کہا، انصاف کے لئے سب کچھ کیا جائے گا۔ بتاتے چلیں کہ ہریانہ پولیس نے ملزم وکاس برالا اور اس کے دوست کے لیے تحقیقات میں شامل ہونے کے لئے سمن جاری کرتے ہوئے بدھ کو بلایا۔ منگل کی شام کو وکاس برالا نے پولیس سے سمن لینے سے منع کر دیا تھا۔ اس کے بعد پولیس نے اس کے سیکٹر -7 واقع گھر پر ہی سمن چسپاں کر دیا۔

طبی رپورٹ میں تصدیق: چھیڑخانی کے وقت شراب کے نشے میں تھا بی جے پی لیڈر کا بیٹا

وکاس برالا: فائل فوٹو

کیا ہے معاملہ؟

وکاس برالا پر الزام ہے کہ شراب کے نشے میں اس نے رات میں سینئر آئی اے ایس کی بیٹی ورتكا کی کار کا پیچھا کیا اور اس کے ساتھ چھیڑخانی کی۔  لڑکی کی شکایت پر اسے گرفتار کر لیا گیا تھا۔ مبینہ طور پر کمزور کیس کی وجہ سے اسے 16 گھنٹے میں ہی ضمانت بھی مل گئی۔ اس معاملہ میں اپوزیشن نے حکومت پر وکاس برالا کو بچانے کا الزام لگایا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز