Live Results Assembly Elections 2018

تعطل ختم کرنے کیلئے کسی شرط کے بغیر ڈوكلام سے ہندوستان کو ہٹانی ہوگی اپنی فوج : چین

چین نے بدھ کو کہا ہے کہ اس نے ہندوستان کو اپنے اس موقف کی اطلاع دے دی ہے کہ موجودہ تعطل ختم کرنے کے لیے اسے کسی شرط کے بغیر سکم علاقہ کے ڈوكلام سے اپنی فوج فوری طور پر ہٹا کر 'ٹھوس کارروائی کرنی ہوگی۔

Aug 02, 2017 07:29 PM IST | Updated on: Aug 02, 2017 07:29 PM IST

نئی دہلی : چین نے بدھ کو کہا ہے کہ اس نے ہندوستان کو اپنے اس موقف کی اطلاع دے دی ہے کہ موجودہ تعطل ختم کرنے کے لیے اسے کسی شرط کے بغیر سکم علاقہ کے ڈوكلام سے اپنی فوج فوری طور پر ہٹا کر 'ٹھوس کارروائی کرنی ہوگی۔ چینی وزارت خارجہ نے قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال اور چین کے اسٹیٹ کونسلر کے درمیان 28 جولائی کو ہوئی ملاقات کی پہلی مرتبہ تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ دونوں افسران نے برکس تعاون، باہمی رشتوں اور متعلقہ بڑے مسائل پر تبادلہ خیال کیا تھا۔

ڈوبھال برازیل، روس، ہندوستان ، چین اور جنوبی افریقہ کے مشترکہ پلیٹ فارم برکس میں حصہ لینے کے لئے گزشتہ ماہ بیجنگ میں تھے۔ ڈوبھال اور چین کے اسٹیٹ کونسلر دونوں ہندوستان اور چین کے درمیان سرحد ی مذاکرات کے لئے خصوصی نمائندے بھی ہیں۔چین کی وزارت خارجہ نے ڈوكلام سے متعلق تعطل پر دونوں ممالک کے درمیان بات چیت کے بارے میں ایک سوال کے تحریری جواب میں بتایا کہ چین کے اسٹیٹ کونسلر نے ڈوبھال سے دو ملاقات کی۔

تعطل ختم کرنے کیلئے کسی شرط کے بغیر ڈوكلام سے ہندوستان کو ہٹانی ہوگی اپنی فوج : چین

چینی وزارت خارجہ نے اشارہ دیا کہ ڈوبھال اورچین کے اسٹیٹ کونسلر کے درمیان مذاکرات کے دوران کوئی اہم پیش رفت نہیں ہوئی۔ وزارت نے کہا کہ چین و ہندوستان سرحد کے سکم حصے پر چین کی سرزمین میں ہندوستانی فورس پر چین کے سخت موقف کو واضح کردیا گیا ۔

خیال رہے کہ ڈوكلام پر تعطل اس وقت شروع ہوا جب چین نے اس علاقے میں سڑک بنانا شروع کیا۔ اس معاملہ پر ہندوستان کا رخ گزشتہ ماہ وزیر خارجہ سشما سوراج نے واضح کردیا تھا۔ انہوں نے سرحد پر تعطل کے پرامن حل کی حمایت کرتے ہوئے کہا تھا کہ اس پر کسی مذاکرات کے شروع کرنے کے لئے پہلے دونوں اطراف کو اپنی اپنی فوجیں ہٹانی چاہئے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز