اب اتراکھنڈ میں داخل ہوئی چین کی فوج ، دو گھنٹے گزارے ، ہندوستانی چرواہوں کو واپس جانے کیلئے کہا

اتراکھنڈ میں چینی فوجیوں نے ایک ہفتے میں چار مرتبہ دراندازی کی ہے۔ چینی فوجیوں نے 24، 25،26 اور 30 ​​جولائی کو اتراکھنڈ کے چمولی ضلع کے باراهوتي علاقہ میں دراندازی کی ۔

Jul 31, 2017 06:52 PM IST | Updated on: Jul 31, 2017 06:52 PM IST

چمولی : اتراکھنڈ میں چینی فوجیوں نے ایک ہفتے میں چار مرتبہ دراندازی کی ہے۔ چینی فوجیوں نے 24، 25،26 اور 30 ​​جولائی کو اتراکھنڈ کے چمولی ضلع کے باراهوتي علاقہ میں دراندازی کی ۔ معلومات کے مطابق چینی فوجی ٹکڑیاں ہندوستانی سرحدی علاقے میں ایک کلو میٹر اندر تک گھس آئیں اور یہاں تقریبا دو گھنٹے گزارنے کے بعد واپس بھی لوٹ گئیں۔

اطلاعات کے مطابق 25 جولائی کو چینی فوج علاقہ میں گھس آئی اور انہوں نے ہندوستانی چرواہوں کو دھمکایا اور واپس جانے کیلئے کہا۔ جب ہندوستانی فوج کی گشتی ٹیم وہاں پہنچی ، تو چینی ٹکڑیاں واپس لوٹ گئیں ۔ خیال رہے کہ اتراکھنڈ میں تقریبا 350 کلو میٹر طویل ہندوستان اور چین کی سرحد ہے۔ پہلے بھی اتراکھنڈ سے متصل سرحد پر چین کی دراندازی کے واقعات کا ذکر ہوا ہے۔

اب اتراکھنڈ میں داخل ہوئی چین کی فوج ، دو گھنٹے گزارے ، ہندوستانی چرواہوں کو واپس جانے کیلئے کہا

تاہم چمولی کے کلکٹر آشیش جوشی نے اس طرح کے کسی بھی واقعہ کی تردید کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسے کسی بھی واقعہ کی اطلاع نہیں ملی ہے۔ 25-26 تاریخ کی رات اگر ایسا کوئی واقعہ پیش آیا ہوتا تو اس کی اطلاع ضرور ملتی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز