جموں و کشمیر میں عید الاضحی کی نماز کی بعد متعدد مقامات پر علاحدگی پسندوں اور سیکورٹی فورسیز میں جھڑپیں

Sep 02, 2017 04:50 PM IST | Updated on: Sep 02, 2017 05:47 PM IST

سری نگر :  دنیا کے مختلف حصوں کی طرح وادی کشمیر میں بھی عیدالاضحی کی تقریب سعید انتہائی جوش و خروش اور روایتی تزک و احتشام کے ساتھ منائی جارہی ہے۔ سنت ابراہیمی (ع) کی پیروی میں جانوروں کی قربانی کا سلسلہ بڑے پیمانے پر جاری ہے۔

تاہم موصولہ اطلاعات کے مطابق نماز عیدین کے اجتماعات کے بعدتقریبا نصف درجن مقامات پرحریت پسندوں اور سیکورٹی فورسزکے مابین پرتشدد جھڑپیں ہوئیں جن میں متعدد افراد بشمول سیکورٹی فورس اہلکاروں کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔ایک نوجوان آنکھ میں پیلٹ لگنے کی وجہ سے زخمی ہوا ہے، جسے علاج ومعالجہ کے لئے سری نگر کے اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔

جموں و کشمیر میں عید الاضحی کی نماز کی بعد متعدد مقامات پر علاحدگی پسندوں اور سیکورٹی فورسیز میں جھڑپیں

file photo

وادی میں ہفتہ کے روز عیدالاضحی کے پیش نظر ریل سروس معطل رہی جبکہ معطلی کا یہ سلسلہ اتوار کو بھی جاری رہے گا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ بیشتر مقامات پر نماز عیدین کے اجتماعات پرامن طور پر اختتام کو پہنچے۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق عیدالاضحی یا عید قربان کے اس سلسلے میں وادی کے طول وعرض کی مساجد، عیدگاہوں اور امام بارگاہوں میں عیدین کی دوگانہ نماز کے روح پرور اجتماعات منعقد ہوئے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز