بی جے پی تاریخ کو مسخ اور آزاد ہندوستان کے بانیوں کو خراب انداز میں پیش کررہی ہے : کانگریس

Jun 22, 2017 08:48 PM IST | Updated on: Jun 22, 2017 08:48 PM IST

نئی دہلی: کانگریس نے آج بھارتیہ جنتا پارٹی کی قیادت والی این ڈی اے حکومت پر تاریخ کو ’مسخ‘ کرنےکی کوششوں اور بالخصوص سوشل میڈیا کے ذریعے '' غلط اطلاعات عام کرنے کی مہم '' شروع کرنے اور مہاتما گاندھی اور پنڈت جواہر لال نہرو سمیت آزاد ہندوستان کے بانیوں کو خراب انداز میں پیش کررہی ہے۔ سینئر کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد نے این ایس یو آئی کانفرنس سے اپنے خطاب میں کہا کہ الیکٹرانک میڈیا، سوشل میڈیا کا استعمال کیا جا رہا ہے اور کانگریس کے لیڈروں اورمجاہدین آزادی کے خلاف مسلسل تباہ کن مہم چلائی جا رہی ہے اور ان لوگوں کومجاہدین آزادی کے طور پر اجاگر کرنے کی کوشش کی جارہی ہے جو برطانیہ کی حمایت میں تھے۔

مسٹر آزاد نے طالب علموں اور این ایس یو آئی رہنماؤں سے اپیل کی کہ وہ سمپوزیم، سیمینارکا انعقاد کریں اور اور مسخ کی جانے والی تاریخ کی درستگی کے لئے کے لئے سوشل میڈیا مہم چلائیں، نوجوانوں کی طاقت کو گمراہ ہونے سے بچائیں اور ان لوگوں کی حقیقت کو بے نقاب کریں جنہیں اب مجاہد آزادی کے طور پر پیش کیا جا رہا ہے۔ راجیہ سبھا میں حزب اختلاف کے رہنما نے کہا کہ بی جے پی کی حکومت والی کئی ریاستوں میں، اسکولوں اور کالجوں کی نصابی کتابوں میں اب ان لوگوں کو مجاہدین آزادی کے طور پر پیش کیا جا رہا ہے جو واقعی میں انگریزوں کی حمایت میں تھے اور آزادی کے خلاف تھے۔

بی جے پی تاریخ کو مسخ اور آزاد ہندوستان کے بانیوں کو خراب انداز میں پیش کررہی ہے : کانگریس

اس موقع پر سینئر کانگریس لیڈر اے کے انٹونی بھی موجود تھے، انہوں نے کہا کہ "نوجوانوں کی پہلی ترجیح اسکولوں اور کالجوں میں طالب علموں کی حمایت کرنا اور ان کے مفادات کی حفاظت کرنا ہونا چاہئے اور فرقہ پرستانہ جذبات و احساسات کو پھیلانے کے خطرے سے بھی لڑنا چاہئے۔ ''

سینئر پارٹی رہنما سلمان خورشید اور راج ببر نے نوجوانوں کو پارٹی کے لئے کام کرنے کے لئے خود کو وقف کرنے کے لئے جھنجھوڑا اور کانگریس پارٹی اور اس اعتماد کا یقین دلایا کہ کانگریس اور اس کی جوان قیادت کے لئے اچھا وقت آئے گا۔ "کانگریس پارٹی 2019 کے انتخابات میں پورے آب و تاب کے ساتھ اقتدار کی دہلیز پر قدم رکھے گی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز