کانگریس کا الزام ، گجرات میں انتخابی فائدہ کیلئے مودی حکومت نے دو سالوں تک بلٹ ٹرین کو سرد بستہ میں رکھا

Sep 14, 2017 05:14 PM IST | Updated on: Sep 14, 2017 05:14 PM IST

نئی دہلی: کانگریس نے وزیر اعظم نریندر مودی پر ترقیاتی منصوبوں کا استعمال انتخابی فائدہ کے لئے کرنے کا الزام لگاتے ہوئے آج کہا کہ انہوں نے احمد آباد ممبئی بلٹ ٹرین پروجکٹ کا فائدہ گجرات اسمبلی انتخابات میں حاصل کرنے کے لئے جان بوجھ کر اسے دو سال تک ملتوی رکھا۔ کانگریس کے سینئر لیڈر ملک ارجن کھڑگے اور آر پی این سنگھ نے یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں خصوصی پریس کانفرنس میں کہا کہ اس منصوبے کے لئے ترقی پسند اتحاد حکومت نے دسمبر 2013 میں جاپان کو قابل عمل ہونے سے متعلق رپورٹ دینے کا کام سونپا تھا اور اس نے اگست 2015 میں اس منصوبے پر کام شروع کرنے کے لئے اپنی رپورٹ سونپ دی تھی لیکن مسٹر مودی نے گجرات انتخابات میں اس منصوبے کا فائدہ اٹھانے کے لئے جان بوجھ کر اسے ملتوی رکھا ۔

انہوں نے کہا کہ اس منصوبے سے لوگوں کو گمراہ کر کے انتخابی فائدہ حاصل کیا جا سکے، اس کے لئے مسٹر مودی نے احمد آباد میں بلٹ ٹرین منصوبے کی بنیاد رکھنے سے پہلے شاندار تقریب منعقد کی اور جاپان کے وزیر اعظم شنزو آبے کے ساتھ روڈ شو کیا۔ مسٹر کھڑگے نے کہا کہ اس منصوبے کا اسمبلی انتخابات میں پورا فائدہ ملے، اس کے لئے احمد آباد اور ممبئی کے درمیان 12 اسٹیشن دئے گئے ہیں۔محض 36 ہزار آبادی والے شہروں میں بھی بلٹ ٹرین کااسٹیشن ہے۔ تیز رفتار سے چلنے والی بلٹ ٹرین کے لئے 12 اسٹیشنوں کو انہوں نے مودی حکومت کی انتخابی حکمت عملی کا تانا بانا بتایا اور کہا کہ اتنے اسٹیشنوں پر رکنے والی بلٹ ٹرین کیسے تیز رفتار سے چل پائے گی۔

کانگریس کا الزام ، گجرات میں انتخابی فائدہ کیلئے مودی حکومت نے دو سالوں تک بلٹ ٹرین کو سرد بستہ میں رکھا

ملک ارجن کھڑگے ۔ فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز