مودی حکومت کی نوٹ بندی کے خلاف آج آر بی آئی دفاتر کا گھیراؤ کرے گی کانگریس

Jan 18, 2017 09:10 AM IST | Updated on: Jan 18, 2017 09:10 AM IST

نئی دہلی۔  کانگریس نے ریزرو بینک کو مرکزی حکومت کی کٹھ پتلی قرار دیتے ہوئے کہا کہ نوٹ کی منسوخی کے اعلان کے 70 دن بعد بھی بینک سے روپے کی منظوری کی حد نہیں ہٹائی گئی ہے اور اس مخالفت میں پارٹی آج ریزرو بینک کا گھیراؤ کرے گی۔ کانگریس مواصلات محکمہ کے سربراہ رنديپ سنگھ سرجےوالا نے یہاں جاری ایک بیان میں کہا کہ کانگریس کے کارکن پارٹی کے سینئر رہنماؤں کی قیادت میں دہلی میں ریزرو بینک کا گھیراؤ کرنے کے ساتھ ہی اس کے 25 دیگر علاقائی دفاتر کا بھی گھیراؤ کریں گے۔ پارٹی کے جنرل سکریٹری، کانگریس ورکنگ کمیٹی کے ارکان، ریاستی صدور اور پارلیمانی پارٹی کے رہنماؤں کی قیادت میں پارٹی کارکن ملک بھر میں ریزرو بینک کا گھیراؤ کریں گے۔

ترجمان نے کہا کہ نوٹ کی منسوخی کی وجہ سے ملک کو بھاری اقتصادی نقصان ہوا ہے اور کروڑوں لوگوں کے سامنے روزي- روٹی کا بحران پیدا ہو گیا ہے۔ ریزرو بینک آزادانہ کردار کی بجائے مودی حکومت کی کٹھ پتلی کی طرح کام کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریزرو بینک کو اب لوگوں کو اپنا جمع پیسہ نکالے کی چھوٹ ملنی چاہئے اور اس پر کسی بھی طرح کی پابندی یا حد طے نہیں کی جانی چاہئے۔

مودی حکومت کی نوٹ بندی کے خلاف آج آر بی آئی دفاتر کا گھیراؤ کرے گی کانگریس

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز