اوکھلا وہارمیٹرو اسٹیشن کے نام پر تنازعہ، اسٹیشن کا نام ابوالفضل انکلیو کرنے کی مانگ

Mar 02, 2017 12:36 PM IST | Updated on: Mar 02, 2017 12:36 PM IST

نئی دہلی۔ نئی دہلی کے مسلم اکثریتی علاقہ  جامعہ نگر کے ابوالفضل انکلیو میں بنے میٹرو اسٹیشن کو اوکھلا وہار میٹرو کا نام دیا گیا ہے۔ تاہم مقامی لوگ مطالبہ کررہے ہیں کہ میٹرو اسٹیشن کو ابوالفضل انکلیو یا یا اوکھلا گاﺅں کے نام سے موسوم کیاجائے ۔ ڈی ایم آر سی نے اس نئی لائن پر 25میٹرو اسٹیشن بنائے ہیں تاہم ان کے نام مقامی علاقوں سے موسوم ہیں یہی وجہ ہے کہ ابوالفضل انکلیو میں بنے اس میٹرو اسٹیشن کا نام لوگوں کے گلے نہیں اتررہا ہے ۔

اب دہلی میٹرو کارپوریشن کی میجیٹا لائن پر تعمیر ہورہے اوکھلا وہار میٹر و اسٹیشن کے نام پر پورا تنازعہ شروع ہو گیا ہے ۔ تھانہ جامعہ نگر کےعین پیچھے واقع اس میٹرو اسٹیشن کے سامنے والی ا س شاہراہ کا نام شاہین باغ ابوالفضل روڈ ہے ۔

اوکھلا وہارمیٹرو اسٹیشن کے نام پر تنازعہ، اسٹیشن کا نام ابوالفضل انکلیو کرنے کی مانگ

قریب کے علاقوں میں اوکھلا گاﺅں، نئی بستی اور شاہین باغ ، نورنگر کے علاقے ہیں۔ لیکن ان ناموں کو نظرانداز کرکے اسٹیشن کا نام زیادہ دور کے علاقہ اوکھلا وہار کے نام پر میٹرو اسٹیشن کا نام رکھ دیا گیا ہے ۔ مقامی لوگ اوکھلا وہار نام کی مخالفت پرزورطریقہ سے کررہے ہیں اور مسلم ناموں کو نظرانداز کرنے کا الزام لگا رہے ہیں ۔

irfanullah khan

میٹرو اسٹیشن سے چار سو میٹر کی دوری پر یہ اوکھلا ٹرمنل کامعروف علاقہ ہے اور تھانہ جامعہ نگر تو میٹرو اسٹیشن کے عین نیچے ہے۔ لوگوں کو جہاں ا س بات پر اعتراض ہے کہ مسلم علاقہ میں تھانے کھولے جارہے ہیں تووہیں  نام پر شروع ہوئے تنازعہ سے مجلس اتحاد المسلمین جیسی سیاسی پارٹی کو بھی بی جے پی اور عام آدمی پارٹی کیخلاف محاذ کھولنے کا موقع مل گیا ہے ۔ دہلی مجلس اتحاد المسلمین کے صدر عرفان اللہ خاں نے بھی اس پر اپنا سخت اعتراض درج کرایا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز