دیکھئے ، عدالت عظمی میں تین طلاق پر سماعت کے دوران کورٹ روم کا کچھ ایسا ہے نظارہ

May 11, 2017 07:06 PM IST | Updated on: May 11, 2017 07:10 PM IST

نئی دہلی : سپریم کورٹ میں آج سے تین طلاق پر سماعت شروع ہو چکی ہے۔ پانچ ججوں کی رکنیت والی آئینی بینچ اس معاملہ کی سماعت کر رہی ہے ، جس کی صدارت چیف جسٹس جے ایس كیهر کر رہے ہیں۔ اس سماعت میں ہندوستان میں مسلم خواتین کے حقوق اور پرسنل لاء کی اتھارٹی پر بحث ہو گی۔ اسے لے کر كورٹروم میں کیا صورت حال ہے، اس بارے میں ہم یہاں بتا رہے ہیں۔

معاملے کی سماعت پانچ ججوں کی رکنیت والی آئینی بینچ کررہی ہے ۔ اس بینچ میں چیف جسٹس جے ایس کیہر کے علاوہ جسٹس کورین جوزف، آریف نریمن، يويو للت اور عبد النذیر بھی شامل ہیں۔

دیکھئے ، عدالت عظمی میں تین طلاق پر سماعت کے دوران کورٹ روم کا کچھ ایسا ہے نظارہ

سپریم کورٹ کی آئینی بنچ میں بالترتیب سکھ، عیسائی، پارسی، ہندو اور مسلم کمیونٹیز کے ایک ایک جج کو آئینی بنچ میں شامل کرکے عدالت نے اس بات کا یقین دلانے کی کوشش کی ہے کہ اس معاملے میں کسی بھی آخری فیصلے پر مذہب کی بنیاد پر سوال نہ کھڑے کئے جائیں۔جبکہ سائرہ بانو، آفرين رحمٰن، گلشن پروین، عشرت جہاں اور عطیہ صابری نے تین طلاق، حلالہ اور تعددازدواج کی آئینی و قانونی حیثیت کو چیلنج کیا ہے۔

Talaq_Urdu final

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز