اترپردیش : بریلی میں 200 سے زائد دلت کنبوں نے چھوڑا ہندو مذہب ، اپنا بدھ مت

May 25, 2017 10:36 PM IST | Updated on: May 25, 2017 10:36 PM IST

بریلی : اتر پردیش کے بریلی میں اس سال گزشتہ پانچ ماہ میں 200 سے زائد دلت کنبوں نے ہندو مذہب چھوڑ کر بدھ مت اپنا لیا ہے۔ کچھ دنوں کے وقفہ سے ایسے معاملات سامنے آ رہے ہیں، جس سے ثابت ہوتا ہے کہ ضلع میں ہندو مذہب چھوڑنے کا سلسلہ مسلسل جاری ہے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ پنچ شیل نگر کے بودھ وہار میں ہر اتوار کو صبح تقریبا 9 بجے درجنوں دلت جمع ہوتے ہیں اور بدھ مت اختیار کرتے ہیں۔ جنوری سے اب تک تقریبا 250 دلت کنبوں نے بدھ مت اپنا لیا ہے۔

اترپردیش : بریلی میں 200 سے زائد دلت کنبوں نے چھوڑا ہندو مذہب ، اپنا بدھ مت

دلتوں کا کہنا ہے کہ برسوں سے ان کا استحصال ہو رہا ہے اور یہی وجہ ہے کہ اب وہ ایسے مذہب میں نہیں رہنا چاہتے ہیں، جہاں انہیں عزت نہیں ملتی ہو۔ بدھ مت کے ایک مذہبی لیڈر جاگن سنگھ راکیش کے مطابق ہندو مذہب میں صدیوں سے چلی آ رہی چتوورن روایت کی وجہ سے دلتوں کا ہمیشہ سے استحصال ہوتا رہا ہے۔ یہ وہ لوگ ہیں جنہیں دلت ہونے کی وجہ سے سماج میں بے عزت ہونا پڑا ہے ۔

ادھر اس پورے واقعہ پر بریلی کے ضلع مجسٹریٹ پنکی جوول نے نیوز 18 ہندی / ای ٹی ای سے خاص بات چیت میں بتایا کہ اس معاملہ میں اے ڈی ایم سٹی کو جانچ کا حکم دے دیا گیا ہے۔ رپورٹ آنے کے بعد کارروائی کی جائے گی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز