شریعت کی روشنی میں مسلم مسائل کے حل کیلئے مختلف شہروں میں دارالقضاء کا جلد ہوگا قیام

Aug 02, 2017 11:27 PM IST | Updated on: Aug 02, 2017 11:27 PM IST

میرٹھ: شریعت کی روشنی میں مسلم طبقہ کے مسائل کے حل کے لئے ملک کے مختلف شہروں میں دارالقضاء کا قیام عمل میں لایا جا رہا ہے ۔ آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کی جانب سے شروع کی گئی اس تحریک کے تحت مغربی یو پی میں دارالقضا کے مرکز کے لئے میرٹھ کا انتخاب کیا گیا ہے ۔ میرٹھ کے مدرسہ جامعہ مدنیہ میں دار القضاء قائم کیا جا رہا ہے ، جس کی افتتاحی تقریب کا انعقاد 11 اگست کو ہوگا ۔

گزشتہ کچھ وقت میں مسلم سماج میں آپسی گھریلو تنازع اور تین طلاق کے معاملات سیاسی مدعے کے ساتھ میڈیا کی توجہ کا بھی خاص مرکز رہے ہیں ۔ ایسے میں دار القضا جیسے اداروں کی ضرورت محسوس کی جاتی رہی ہے ، جو قرآن اور حدیث کی روشنی میں مسلم سماج کے آپسی گھریلو اور سماجی مسائل کو حل کرنے کا ذریعہ ثابت ہو ۔ آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کی یہ پیش رفت اسی تحریک کی ایک شروعات ہے۔

شریعت کی روشنی میں مسلم مسائل کے حل کیلئے مختلف شہروں میں دارالقضاء کا جلد ہوگا قیام

علماکے مطابق دار القضا کے قیام کا مقصد مسلم سماج کے اندرونی معاملات کو سماج کے اندر ہی حل کرنا ہے نہ کی قانون اور عدالت کے مساوی کوئی دوسرا ادارہ قائم کرنا ہے ۔ دار القضا سے وابستہ مسلم سماجی اور ملّی تنظیم کے افراد کا کہناہے کہ سماجی اور ملّی خدمات کے مقصد سے قائم کیا جا رہا یہ ادارہ عدالتوں کے لئے بھی مددگار ثابت ہوگا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز