دارالعلوم دیوبند میں طالب علموں کے لئے اینڈرائڈ فون کے استعمال پر پابندی عائد

Jul 29, 2017 09:28 AM IST | Updated on: Jul 29, 2017 09:28 AM IST

سہارنپور۔ سہارنپور میں جمعہ کو معروف دینی تعلیمی ادارے دارالعلوم دیوبند نے طالب علموں کے لئے اینڈرائڈ فون پر مکمل طور پابندی لگا دی ہے۔ وہیں دارالعلوم کی طرف سے جاری ہدایت نامہ میں یہ بھی خبردار کیا گیا ہے کہ پکڑے جانے پر طالب علم کا نام کاٹ دیا جائے گا۔ بتا دیں کہ دارالعلوم دیوبند میں ملک و بیرون ملک سے ہزاروں طالب علم اسلامی تعلیم حاصل کر رہے ہیں۔ وہیں، دارالعلوم دیوبند نے طالب علموں کی تعلیم کو بہتر بنانے کے لئے طالب علموں کو اینڈرائڈ موبائل نہیں رکھنے کا فرمان جاری کیا ہے۔

دارالعلوم کے وائس چانسلر مولانا ابوالقاسم نعمانی نے بتایا کہ بچوں کو تعلیم یافتہ کے ساتھ ہی تہذیب یافتہ بھی بنانا ہے۔ فلم، سنیما، کرکٹ دیکھنے اور انٹرنیٹ پر غیر ضروری ویب سائٹ دیکھنے والے طالب علموں کو تعلیم سے محروم کر دیا جائے گا۔

دارالعلوم دیوبند میں طالب علموں کے لئے اینڈرائڈ فون کے استعمال پر پابندی عائد

انہوں نے بتایا کہ کیمرے والے اور فیچر والے اینڈرائڈ موبائل فون رکھنا دارالعلوم میں جرم ہو گا۔ البتہ ضروری بات چیت کے لئے یہ طالب علم سادہ فون رکھ سکتے ہیں۔ لیکن، اس کا استعمال بھی تعلیمی وقت کے علاوہ ہی کیا جا سکے گا۔ دوسری طرف طلبا نے بھی دارالعلوم کے اسمارٹ فون کی روک کے فیصلے کا خیر مقدم کیا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز