انتہائی شرمناک ! ٹیوشن سے لوٹ رہی آبروریزی کی متاثرہ لڑکی کو زبردستی پلایا گیا زہر ، اسپتال میں داخل

راجدھانی دہلی میں واقع دوارکا کے ہستسیال علاقہ میں ٹیوشن سے گھر لوٹ رہی 17 سال کی آبروریزی کی متاثرہ لڑکی کو موٹر سائیکل پر سوار دو لوگوں نے مبینہ طور پر زہر پینے پر مجبور کردیا ۔

Jan 13, 2019 09:34 AM IST | Updated on: Jan 13, 2019 09:34 AM IST

راجدھانی دہلی میں واقع دوارکا کے ہستسیال علاقہ میں ٹیوشن سے گھر لوٹ رہی 17 سال کی آبروریزی کی متاثرہ لڑکی کو موٹر سائیکل پر سوار دو لوگوں نے مبینہ طور پر زہر پینے پر مجبور کردیا ۔ پولیس نے ہفتہ کو یہ معلومات دی ۔ پولیس نے بتایا کہ یہ واقعہ جمعرات کو پیش آیا ۔

پولیس کے ایک سینئر افسر کے مطابق لڑکی نے اپنی شکایت میں الزام لگایا ہے کہ وہ جب ٹیوشن سے لوٹ رہی تھی تو موٹرسائیکل پر سوار دو لوگوں نے اس کو راستے میں روک لیا اور کہا کہ اگر وہ آبروریزی کے ملزم کے خلاف عدالت میں بیان دیتی ہے تو اس کو سنگین نتائج بھگتنے پڑیں گے ۔ تاہم جب اس نے اس سے منع کردیا تو ان دونوں نے اس کو زبردستی زہر پلادیا ۔

انتہائی شرمناک ! ٹیوشن سے لوٹ رہی آبروریزی کی متاثرہ لڑکی کو زبردستی پلایا گیا زہر ، اسپتال میں داخل

علامتی تصویر

پولیس کے مطابق اس کے بعد ملزمین جائے واقعہ سے فرار ہوگئے ۔ افسر نے بتایا کہ لڑکی نیم بیہوشی کی حالت میں ایک آٹورکشہ سے دین دیال اپادھیائے اسپتال پہنچی ، اب وہ خطرے سے باہر ہے۔ انہوں نے بتایا کہ جمعہ کو لڑکی پولیس کے پاس پہنچی اور اس سلسلہ میں دو افراد کے خلاف اتم نگر پولیس تھانہ میں معاملہ درج کیا گیا ۔

افسر نے بتایا کہ ابتدائی جانچ میں ایسا لگ رہا ہے کہ آبروریزی ملزم کے معاونین نے لڑکی کو عدالت میں بیان دینے سے روکنے کیلئے زہر دینے کی کوشش کی ۔ اس بات کی تصدیق کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ آبروریزی کا ملزم حال ہی میں ضمانت پر باہر آیا ہے۔ رہنولا پولیس تھانہ میں 2018 میں ملزم کے خلاف اغوا اور آبروریزی کا معاملہ درج ہوا تھا۔

Loading...

یہ بھی پڑھیں : عاشق جوڑے کے ساتھ شرپسند عناصر نے کی چھیڑ چھاڑ ، لڑکی کا اتروایا کپڑا ، فحش ویڈیو بناکر کیا وائرل

 

 

Loading...