سرکاری میں نہ ملے سہولت تو نجی اسپتال میں کروائیں سرجری، دہلی حکومت دے گی پیسہ

Jul 08, 2017 08:52 PM IST | Updated on: Jul 08, 2017 08:52 PM IST

نئی دہلی۔ دہلی حکومت نے دہلی والوں کے لئے ایک نئی اسکیم کا اعلان کیا ہے۔ سرکاری اسپتالوں میں ایک ماہ تک سرجری کی تاریخ نہ ملنے پر مریض کسی بھی پرائیویٹ ہسپتال میں سرجری کرا سکیں گے۔ وہیں اس سرجری میں آنے والے اخراجات کی ادائیگی دہلی حکومت کرے گی۔ ہفتہ کو مفت سرجری اسکیم کا آغاز کرتے ہوئے دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ اگر مریض کو کوئی بھی بیماری ہے اور اسے سرکاری ہسپتال کی جانب سے ایک ماہ کے اندر سرجری کی تاریخ نہیں مل رہی تو وہ پرائیویٹ ہسپتال میں بھی سرجری کرا سکتا ہے۔

دہلی حکومت نے 52 اہم سرجری کے لئے پرائیویٹ میں علاج کرانے کی چھوٹ دی ہے۔ جس میں ہارٹ کی بائی پاس سرجری سے لے کر آٹھ قسم کی تھارايڈ سرجری، پروسٹیٹ سرجری، نو قسم کی پائلس سرجری، ایئر، ٹانسل وغیرہ سرجری شامل ہیں۔ اروند کیجریوال نے کہا کہ دہلی حکومت صحت خدمات پر خصوصی توجہ دے رہی ہے۔ یہ دہلی نہیں ملک کے لئے بھی تاریخی قدم ہے۔

سرکاری میں نہ ملے سہولت تو نجی اسپتال میں کروائیں سرجری، دہلی حکومت دے گی پیسہ

وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال: فائل فوٹو

وہیں منیش سسودیا نے بتایا کہ گزشتہ تین سال میں دہلی حکومت نے 25 فیصد تعلیم پر تو 14 فیصد بجٹ صحت کی خدمات پر خرچ کیا ہے۔ وہیں دہلی کے وزیر صحت ستیندر جین نے کہا کہ سرکاری اسپتالوں کو اتنا کرنا ہو گا کہ وہ سہولت نہ ہونے پر پرائیویٹ میں ریفر کر دیں۔ آج صحت کی خدمات اتنی مہنگی ہیں کہ مڈل کلاس بھی نہیں برداشت کر سکتا۔ اب دہلی حکومت علاج کرائے گی۔ سرکاری اسپتال جتنا پیسہ مانگیں گے اتنا دیں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز