وزیر اعلی نتیش کمار پر دلی ہائی کورٹ نے لگایا جرمانہ

کورٹ نے نتیش کمار پر جرمانہ لگانے کے ساتھ ساتھ اس درخواست کو بھی مسترد کر دیا ہے جس میں انہوں نے اپنا نام فریقین سے ہٹانے کی بات کی ہے۔

Aug 05, 2017 02:00 PM IST | Updated on: Aug 05, 2017 02:00 PM IST

نئی دہلی۔ دلی ہائی کورٹ نے بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار پر 20 ہزار کا جرمانہ ٹھونكا ہے۔ نتیش پر یہ جرمانہ کتاب کی اشاعت میں کاپی رائٹ کی خلاف ورزی کے معاملے میں لگایا گیا ہے۔ کورٹ نے نتیش کمار پر جرمانہ لگانے کے ساتھ ساتھ اس درخواست کو بھی مسترد کر دیا ہے جس میں انہوں نے اپنا نام فریقین سے ہٹانے کی بات کی ہے۔ نتیش کمار پر جس معاملہ میں جرمانہ عائد کیا گیا ہے وہ جے این یو کے سابق محقق اور سیاستداں نے درج کرایا تھا۔ درخواست گزار نے تحقیق کی چوری کر کتاب چھاپنے کا الزام لگایا تھا۔

سیاستداں اتل کمار سنگھ نے الزام لگایا تھا کہ پٹنہ واقع ایشین ڈیولپمنٹ ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کی طرف سے اپنے رکن سیکرٹری شیبال گپتا کے ذریعے اور وزیر اعلی نتیش کمار کی منظوری سے شائع کتاب 'اسپیشل کیٹیگری اسٹیٹس اے کیس فار بہار' ان کے تحقیقی کام کا چرایا ہوا ورژن ہے۔

وزیر اعلی نتیش کمار پر دلی ہائی کورٹ نے لگایا جرمانہ

بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار: فائل فوٹو

اس معاملہ میں وزیر اعلی نے ہائی کورٹ کو یہ بتایا تھا کہ اس بحث کو لے کر ان کے خلاف کوئی کیس نہیں بنتا اور انہیں غلط منشا سے شرمندہ کرنے کے لئے فریق بنایا گیا ہے، لیکن ہائی کورٹ نے وزیر اعلی کی دلیلوں کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ان پر مقدمہ ہونے کی کافی وجوہات ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز