دہلی میونسپل کارپوریشنوں کے انتخابات 22 اپریل کو بذریعہ ای وی ایم، 25 اپریل کو نتائج کا اعلان

Mar 14, 2017 08:02 PM IST | Updated on: Mar 14, 2017 08:03 PM IST

نئی دہلی۔  دہلی کے تینوں میونسپل کارپوریشنوں کے انتخابات 22 اپریل کو الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) سے ہی کرائے جائیں گے اور ووٹوں کی گنتی 25 اپریل ہوگی۔ دہلی کے الیکشن کمشنر ایس کے شریواستو نے آج یہاں نامہ نگاروں کو بتایا کہ دہلی کے تینوں میونسپل کارپوریشنوں کے انتخابات کے لئے پولنگ 22 اپریل کو اور ووٹوں کی گنتی 25 اپریل کو ہوگی۔ اس کے لئے کاغذات نامزدگی 27 مارچ سے بھرے جائیں گے۔ کاغذات نامزدگی بھرنے کی آخری تاریخ تین اپریل ہوگی۔ کاغذات نامزدگی کی جانچ پانچ اپریل تک ہوگی اور آٹھ اپریل تک نام واپس لئے جا سکیں گے۔

یہ پوچھے جانے پر کہ دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے بلدیاتی انتخابات ای وی ایم کی بجائے بیلٹ پیپر کے ذریعے کرنے کے لئے خط لکھا ہے، مسٹر شریواستو نے بتایا کہ یہ خط آج ہی ملا ہے اور کمیشن نے اس سلسلے میں اپنی رائے سے دہلی حکومت کو مطلع کر دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن نے ای وی ایم کے ذریعے ہی پولنگ کرانے کی تیاری کی ہے۔ بیلٹ پیپر کے ذریعے انتخابات کرانے کے لئے قوانین میں تبدیلی کرنی ہوگی۔ انہوں نے بتایا کہ اس سے پہلے بھی 2007 اور 2012 کے کارپوریشن انتخابات ای وی ایم کے ذریعے کرائے جا چکے ہیں۔ سال 2013 اور 2016 میں بھی کارپوریشنوں کے ضمنی انتخابات ای وی ایم سے ہی ہوئے تھے۔ الیکشن کمشنر نے کہا کہ ای وی ایم سے ووٹنگ کرانے کے لئے تمام احتیاط برتے جائیں گے اور کسی بھی قسم کی گڑبڑی کی گنجائش نہیں رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ انتخابات کی تاریخ کے اعلان کے ساتھ ہی دارالحکومت میں انتخابی ضابطہ اخلاق نافذ ہو گیا ہے۔ اس بار دہلی بلدیاتی انتخابات میں کل ایک کروڑ 32 لاکھ 10206 ووٹر ہیں۔ ان میں 73 لاکھ 15 ہزار 955 مرد، 58 لاکھ 93 ہزار 418 خواتین اور 793 دیگر افراد ہیں۔

دہلی میونسپل کارپوریشنوں کے انتخابات 22 اپریل کو بذریعہ ای وی ایم، 25 اپریل کو نتائج کا اعلان

چیف الیکشن کمشنر ایس کے شری واستو: فائل فوٹو

تینوں کارپوریشنوں میں کل 272 وارڈ ہیں۔ ان میں شمالی دہلی اور مغربی دہلی کارپوریشنوں میں 104اور مشرقی دہلی کارپوریشن میں 64 وارڈ ہیں۔ شمالی دہلی میں 42 وارڈ اور جنوبی دہلی میں 44 عام زمرے کے لئے ہیں۔ مشرقی دہلی میں یہ تعداد 26 ہے۔ شمالی اور جنوبی دہلی میں بالترتیب 10 اور 8 وارڈ درج فہرست ذات کی خواتین کے لیے مخصوص ہیں۔ مشرقی دہلی میں چھ وارڈ اس ایس ٹی کے لیے مخصوص ہیں۔ شمالی دہلی اور جنوبی دہلی میں بالترتیب 10 اور 7 وارڈ اور مشرقی میں پانچ ایس سی طبقے کے لیے مخصوص ہیں۔ شمالی اور جنوبی دہلی میں بالترتیب 42 اور 45 اور مشرقی دہلی میں 27 وارڈ خواتین کے لیے محفوظ ہیں۔ اس طرح کل 272 وارڈوں میں سے 140 وارڈ خواتین کے لیے مخصوص ہیں۔ مسٹر شریواستو نے بتایا کہ کارپوریشن انتخابات میں پہلی بار نوٹا کا استعمال ہوگا۔اخراجات کی حد کو پانچ لاکھ روپے سے بڑھا کر پانچ لاکھ 75 ہزار روپے کیا گیا ہے۔ پولنگ صبح آٹھ بجے سے شام ساڑھے پانچ بجے تک ہوگی۔ تقریبا 14 ہزار پولنگ مراکز بنائے جائیں گے۔ گزشتہ انتخابات میں یہ تعداد 11542 تھی۔ انتخابات کے لئے کل 17 ہزار دستے(ایک ٹیم میں پانچ لوگ) یعنی 85 ہزار لوگوں کو تعینات کیا جائے گا۔ مرکزی حکومت سے چھ ہزار دستے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ باقی کا انتظام کارپوریشن اور دہلی حکومت کرے گی۔ رات دس بجے سے صبح چھ بجے تک لاؤڈ اسپیکر پر پابندی رہے گی۔

انتخابات کے لئے 11 ضلعی الیکشن افسر اور 72 الیکشن افسر مقرر کئے جائیں گے۔ ہر وارڈ کے لئے ایک اسسٹنٹ الیکشن افسر اور تقریبا 1500 علاقائی افسر مقرر کئے گئے ہیں۔ اس کے علاوہ 72 مشاہدین مقرر کئے جائیں گے۔ تمام حساس پروگراموں کی ویڈیوگرافی کرائی جائے گی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز