کشمیر میں پہلے پتھراؤ بند ہو، پھر شروع ہوگی بات چیت : امت شاہ

May 28, 2017 11:05 PM IST | Updated on: May 28, 2017 11:05 PM IST

نئی دہلی : بی جے پی صدر امت شاہ نے کشمیر میں پتھراؤ کے واقعات بند ہونے تک بات چیت کے امکان کو مسترد کردیا ہے ۔ اگرچہ انہوں نے اس بات پر بھی زور دیا ہے کہ حکومت تشدد ختم ہونے کے بعد سب سے بات چیت کرے گی ۔ یہ پوچھے جانے پر کہ کیا حکومت علیحدگی پسندوں سے بھی بات چیت کرے گی ، جیسا پچھلی یو پی اے حکومت نے کیا تھا ، شاہ نے کہا کہ جب تشدد ختم ہو جائے گا اور بات چیت کے لئے ماحول بنے گا تو ہم سب سے بات چیت کریں گے ۔

کشمیر کی صورتحال کے بارے میں شاہ نے کہا کہ پتھر بازی بات چیت ساتھ ساتھ نہیں ہو سکتی ۔ مودی حکومت کی پاکستان کے تئیں پالیسی کے بارے میں ایک سوال کے جواب میں امت شاہ نے کہا کہ اس کی باریکیوں کو سمجھنا ضروری ہے ۔

کشمیر میں پہلے پتھراؤ بند ہو، پھر شروع ہوگی بات چیت : امت شاہ

شاہ نے کہا کہ جب ہماری حکومت کی حلف برداری تھی ، تب ہم نے اپنے تمام ہمسایہ ممالک کے سربراہان مملکت کو بلایا تھا ، جس کا مقصد یہ تھا کہ ہم سب پڑوسیوں کے ساتھ اچھے تعلقات چاہتے تھے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز