ڈمپل یادو کا دعوی ، ایس پی نے بنوائے تھے لورس پارک ، بی جے پی بٹھائے گی محبت پر پہرہ

Feb 17, 2017 11:52 AM IST | Updated on: Feb 17, 2017 11:52 AM IST

لکھنو : اکھلیش یادو کی بیوی ڈمپل یادو نے یو پی انتخابات میں نوجوانوں کو سماج وادی پارٹی کی طرف متوجہ کرنے کا نیا داؤ چلا ہے۔ قنوج سے ممبر پارلیمنٹ ڈمپل نے دعوی کیا ہے کہ ایس پی حکومت نے اپنے دور اقتدار میں نوجوان محبت کرنے والوں کے لئے محفوظ پارک بنائے تھے، لیکن بی جے پی حکومت آئی تو ان کی محبت پر پہرہ بٹھایا سکتا ہے۔

لکھنؤ کے سروجنی نگر اسمبلی سیٹ پر ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ڈمپل نے جمعرات کو یہ بات کہی۔ ڈمپل نے نوجوانوں کو ہوشیار کیا کہ وہ بی جے پی کے اینٹی رومیو اسکواڈ کے بہکاوے میں نہ آئیں۔ بی جے پی میں اپنے منشور میں خواتین سے چھیڑ چھاڑ روکنے کے لئے اینٹی رومیو اسکواڈ بنانے کی بات کہی ہے۔

ڈمپل یادو کا دعوی ، ایس پی نے بنوائے تھے لورس پارک ، بی جے پی بٹھائے گی محبت پر پہرہ

ڈمپل نے کہا کہ دراصل بی جے پی کی حکومت بننے پر یہی اسكواڈ اینٹی رومیو-جولیٹ اسكواڈ کے طور پر کام کرے گا اور عاشق جوڑوں کو ایذا پہنچائے گا اور انہیں اپنا شریک حیات منتخب کرنے کی آزادی کو ختم کر دے گا۔

ایس پی امیدوار انوراگ یادو کی حمایت میں ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ڈمپل نے کہا کہ ایس پی حکومت نے جنیشور مشر پارک سمیت کئی ایسے مقامات بنائے ہیں ، جہاں محفوظ ماحول ہے۔ ان پارکوں میں آپ اپنے بچوں کے ساتھ کھیل سکتے ہیں، اپنی ماں، بیوی اور یہاں تک کہ اپنی گرل فرینڈ کو بھی لے جا سکتے ہیں۔

تاہم ڈمپل نے صاف طور پر یہ نہیں کہا لیکن ان کا اشارہ بھگوا بریگیڈ کے ذریعہ لو جہاد اور ویلنٹائن ڈے کی مخالفت کو لیکر ہی تھا۔ ڈمپل نے آگے کہا کہ سماج وادی پارٹی حکومت نے ڈائل 100 کے ذریعے نہ صرف پولیسنگ میں بہتر کیا ہے ، بلکہ خواتین ہیلپ لائن نمبر 1090 سے تقریبا 6 لاکھ لڑکیوں کو منچلوں سے بچایا بھی ہے۔

بی جے پی پر نشانہ سادھتے ہوئے ڈمپل نے کہا کہ ان کے لیڈر یہ کہہ کر الجھن پیدا رہے تھے کہ یوپی میں ساڑھے چار وزرائے اعلی کی حکومت ہے، لیکن وہی لوگ جو یہ بھرم پھیلا رہے تھے ، آج ایک وزیر اعلی کا چہرہ تک نہیں دے سکے۔ وہیں اکھلیش ایک کامیاب لیڈر کے طور پر ابھرے ہیں اور ریاست کو ترقی کی راہ پر لے کر آگے بڑھے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز