ملک میں بغیر ڈرائیور میٹرو چلانے کی منصوبہ بندی، شروع ہو چکا ہے ٹرائل

May 23, 2017 04:01 PM IST | Updated on: May 23, 2017 04:03 PM IST

نئی دہلی۔ ملک میں پہلی بار ڈرائیور کے بغیر (ان اٹینڈیڈ ٹرین آپریشن) میٹرو ٹرین کا ٹرائل چل رہا ہے۔ کامیابی کے بعد اسے جولائی سے لے کر ستمبر تک شروع کرنے کا امکان ہے۔ لیکن، شروع میں یہ ٹرین ڈرائیور کے ساتھ ہی چلے گی، بعد میں اسے ہٹا دیا جائے گا۔ دہلی میٹرو میں پی آر او مہیندر یادو نے بتایا کہ نئی ٹکنالوجی ہے لہذا شروع میں ڈرائیور موجود رہے گا، لیکن سیکورٹی کو لے کر مکمل طور پر پراعتماد ہونے کے بعد ڈرائیوروں کو آہستہ آہستہ ہٹا لیا جائے گا اور ٹرینیں بغیر ڈرائیور کے چلنے لگیں گی۔

ابھی كالكاجی-بوٹینیکل گارڈن روٹ پر اس کا ٹرائل چل رہا ہے۔ اسے مکمل ہونے کے بعد میٹرو ریل سیکورٹی کمشنر چیک کریں گے۔ ان کی این او سی ملنے کے بعد اسے شروع کیا جائے گا۔ میٹرو فیز تین کی دو اہم لائنوں، 58.59 کلو میٹر لمبی پنک لائن (مجلس پارک سے شیو وہار) اور 34.27 کلومیٹر کی مجنٹا لائن (جنک پوری پچھم سے بوٹینكل گارڈن) پر اس کی شروعات ہوگی۔ اس میں ڈرائیور کیبن نکال دیے جانے کے بعد مسافروں کو فائدہ ملے گا۔ زیادہ لوگ سفر کر پائیں گے۔ اس میں 20 ٹرینیں جنوبی کوریا میں بنی ہیں۔ کل 81 (486 کوچ) ڈرائیور لیس میٹرو ٹرینیں دہلی میٹرو نے خریدی ہیں۔

ملک میں بغیر ڈرائیور میٹرو چلانے کی منصوبہ بندی، شروع ہو چکا ہے ٹرائل

ڈرائیور لیس میٹرو ٹرین

اکسٹھ بنگلورو میں بن کر تیار ہو رہی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ چھ ڈبوں والی ٹرین میں پہلے کے مقابلے میں 240 مسافر زیادہ سفر کر پائیں گے۔ 2280 مسافر سفر کر پائیں گے۔ 20 فیصد توانائی کی کھپت اس سے کم ہو گی۔ جن اسٹیشنوں سے یہ ٹرین گزرے گی ان کے پلیٹ فارم پر اسکرین دروازے ملیں گے۔ سیکورٹی کے لحاظ سے یہ اسکرین دروازے اس لئے لگائے گئے ہیں جس سے کوئی بھی ٹریک پر نہ جا سکے۔ یہ دروازے تبھی کھلیں گے جب پلیٹ فارم پر میٹرو ٹرین آکر کھڑی ہو گی۔ اس کے دروازے کے ساتھ یہ کھل جائے گا اور پھر بند ہو جائے گا۔

ڈرائیورلیس ٹرین کے لئے بن کر تیار كالندی کنج، نوئیڈا کے پاس میٹرو اسٹیشن ڈرائیورلیس ٹرین کے لئے بن کر تیار كالندی کنج، نوئیڈا کے پاس میٹرو اسٹیشن

باراكھنبا روڈ پر واقع میٹرو بھون میں آپریشنز کنٹرول سینٹر ہو گا۔ پلیٹ فارم اسکرین دروازے اور مسافر الارم بٹن ہوں گے۔ پریشانی کے وقت مسافر الارم بٹن دبا کر آپریشنز کنٹرول سینٹر سے جڑ سکتے ہیں۔ اس کے اندر، باہر دونوں جانب سی سی ٹی وی کیمرے ہیں۔ وائی ​​فائی کی سہولت بھی ملے گی۔ ان ٹرینوں کے اسٹارٹ، اسٹاپ اور دروازے کھولنے اور بند کرنے میں کسی بھی ڈرائیور کے موجود رہنے کی ضرورت نہیں ہے۔ ایمر جنسی سروس سمیت ہر طرح کے آپریشن کو ریموٹ کنٹرول سے آپریٹ کیا جا سکتا ہے۔

Driverless-Metro

معذوروں کے لئے میٹرو ٹرین زیادہ آرام دہ اور پرسکون ہو گا۔ وہیل چیئر والے حصے میں پیٹھ کو سہارا دینے کے لئے خاص بیک ریسٹ لگایا گیا ہے۔ کھڑے سفر کرنے والوں کے لئے پول اور گریب ریل کو دوبارہ سے ڈیزائن کیا گیا ہے۔ خواتین اور بوڑھوں کی سیٹوں کو الگ رنگ میں دیا گیا ہے۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز