ای وی ایم ہیکنگ کی کوشش شروع ، 2 بجے تک الیکشن کمیشن نے دیا وقت

Jun 03, 2017 11:41 AM IST | Updated on: Jun 03, 2017 11:41 AM IST

نئی دہلی : ہندوستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ای وی ایم یعنی ملک کی ہر ریاست اور ضلع میں جمہوریت قائم کرنے والی مشین الیکٹرانک ووٹنگ مشین کو خود سخت امتحان سے گزرنا پڑ رہا ہے ۔ صبح 10 بجے سے شروع ہوا یہ امتحان دوپہر دو بجے تک ہوگا ۔ یعنی 4 گھنٹے تک اس مشین کو ہیک کرنے کی کوشش کی جائے گی ۔

الیکشن کمیشن نے ای وی ایم کو ہیک کرنے کا چیلنج کیا تھا ، جسے این سی پی اور سی پی ایم نے قبول کیا  تھا ۔ دونوں ہی پارٹیوں نے اس کے لئے تین تین لوگوں کو نامزد کیا ہے ۔ دونوں پارٹیوں کو مشینوں سے چھیڑ چھاڑ کی کوشش کرنے کے لئے الگ الگ ہال دئے گئے ہیں ۔

ای وی ایم ہیکنگ کی کوشش شروع ، 2 بجے تک الیکشن کمیشن نے دیا وقت

file photo

غور طلب ہو کہ اتراکھنڈ ہائی کورٹ نے الیکشن کمیشن کی آئینی حیثیت پر کسی طرح کا فیصلہ دینے سے انکار کر دیا تھا ۔ الیکشن کمیشن نے ای وی ایم ہیک چیلنج اس وقت کیا تھا ، جب کئی بڑی اپوزیشن سیاسی جماعتوں نے دعوی کیا کہ ای وی ایم سے لوگوں کا اعتماد اٹھ گیا ہے ۔ بی ایس پی اور عام آدمی پارٹی نے الزام لگایا تھا کہ حالیہ اسمبلی انتخابات میں استعمال کی گئی الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں سے چھیڑ چھاڑ کی گئی تھی اور ان کے ذریعہ بی جے پی کو فائدہ پہنچا یا گیا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز