فاروق عبداللہ کی سرینگر پارلیمانی ضمنی الیکشن میں جیت، 7.13٪ پڑا تھا ووٹ

سری نگر۔ نیشنل کانفرنس کے صدر اور جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی فاروق عبداللہ نے سری نگر-بڈگام پارلیمانی ضمنی انتخابات میں جیت درج کی ہے۔

Apr 15, 2017 07:23 PM IST | Updated on: Apr 15, 2017 07:23 PM IST

سری نگر۔ نیشنل کانفرنس کے صدر اور جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی فاروق عبداللہ نے سری نگر-بڈگام پارلیمانی ضمنی انتخابات میں جیت درج کی ہے۔ انہوں نے پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی) کے نذیر احمد خان کو 10557 ووٹوں کے فرق سے شکست دی۔ الیکشن حکام نے کہا کہ فاروق کو 47 ہزار 9 سو 26 ووٹ ملے تھے جبکہ خان کے حق میں 37 ہزار 369 ووٹ پڑے۔ نوٹا کے حق میں 714 ووٹ پڑے۔

ضمنی انتخاب میں کل 7.13 فیصد یعنی 89865 لوگوں نے اپنے ووٹ کا حق استعمال کیا تھا۔ انتخابات کے دوران تشدد میں سات لوگوں کی موت ہوئی تھی۔ پولنگ گزشتہ نو اپریل کو ہوئی تھی، جبکہ ووٹوں کی گنتی ہفتہ صبح آٹھ بجے شروع ہوئی۔ ووٹنگ کے دوران صرف سات فیصد ووٹروں نے ہی اپنے ووٹ کا حق استعمال کیا تھا۔

فاروق عبداللہ کی سرینگر پارلیمانی ضمنی الیکشن میں جیت، 7.13٪ پڑا تھا ووٹ

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز