نیپال سے پانی چھوڑنے اور مسلسل بارش سے سدھارتھ نگر میں 24 سے زائد گاؤں سیلاب کی زد میں

Aug 14, 2017 08:16 PM IST | Updated on: Aug 14, 2017 08:16 PM IST

سدھارتھ نگر: نیپال پانی چھوڑے جانے اور تین دنوں سے مسلسل ہو نے والی بارش سے اترپردیش کے سدھارتھ نگر میں 24 سے زائد گاؤں سیلاب کی زد میں ہیں۔ سرکاری ذرائع نے آج یہاں بتایا کہ بوڑھی راپتی ​​ندی کے خطرے کے نشان سے ایک میٹر اوپر اور گھوگھي ندی خطرے کے نشان سے 50 سینٹی میٹر اوپر بہہ رہی ہے۔ راپتی ​​اور کوڑا ندیوں کی آبی سطح بھی خطرے کے نشان کے قریب پہنچ چکی ہے۔ شدید بارش سے سب سے خراب حالت ضلع ہیڈکوارٹر میں ہے جہاں تمام سڑکیں دو سے تین فٹ تک پانی میں ڈوبی ہوئی ہیں جبکہ كلیكٹریٹ سمیت ضلع ہیڈکوارٹر کے تمام دفاتر میں پانی بھر گیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ راپتی ​​ندی میں مٹی کٹنے سے نركٹيا پروٹیکشن ڈیم اور بانگنگا کے کٹنے سے بانگنگا بیراج کو خطرہ پیدا ہوگيا ہے۔ ندیوں میں پانی کی سطح میں اضافہ سے ضلع میں سیلاب کی حالت اور بگڑنے کا خدشہ ہے۔ انہوں نے بتایا کہ سیلاب سے نمٹنے کے لئے كلكٹریٹ میں کنٹرول روم بنا یا گيا ہے اور ضلع کے تمام پرگنہ مجسٹریٹ کو اس سلسلے میں الرٹ کر دیا گیا ہے۔

نیپال سے پانی چھوڑنے اور مسلسل بارش سے سدھارتھ نگر میں 24 سے زائد گاؤں سیلاب کی زد میں

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز