صدارتی انتخابات : رام ناتھ كووند کے خلاف سابق لوک سبھا اسپیکر میرا کمار ہوں گی اپوزیشن کی مشترکہ امیدوار

Jun 22, 2017 06:02 PM IST | Updated on: Jun 22, 2017 06:02 PM IST

نئی دہلی: 17 جولائی 2017 کو ہونے والے صدارتی انتخابات کے لئے حزب اختلاف نے لوک سبھا کی سابق اسپیکر میرا کمار کو اپنا مشترکہ امیدوار بنایا ہے۔ اس طرح اپوزیشن نے این ڈی اے کے امیدوار رام ناتھ كووند کے سامنے خاتون اور دلت امیدوار کو کھڑا کر کے اپنا چیلنج پیش کیا ہے۔

صدارتی انتخابات پر پارلیمنٹ ہاؤس کی لائبریری میں 17اپوزیشن پارٹیوں کی میٹنگ ہوئی، جس کی قیادت کانگریس صدر سونیا گاندھی نے کی۔ میٹنگ میں سونیا گاندھی، منموہن سنگھ، احمد پٹیل، غلام نبی آزاد، اے کے انٹونی، ملک ارجن کھڑگے موجود رہے۔ بی ایس پی سے ستیش مشرا، ترنمول کانگریس سے ڈیریک او برائن، ایس پی سے رام گوپال یادو، نریش اگروال، آر ایل ڈی سے اجیت سنگھ، نیشنل کانفرنس سے عمر عبداللہ، این سی پی سے شرد پوار، پرفل پٹیل، طارق انور، سی پی ایم سے سیتا رام یچوری، سی پی آئی سے ڈی راجہ بھی میٹنگ میں شامل ہوئے۔

صدارتی انتخابات : رام ناتھ كووند کے خلاف سابق لوک سبھا اسپیکر میرا کمار ہوں گی اپوزیشن کی مشترکہ امیدوار

پہلے کہا جا رہا تھا کہ این سی پی بھی نتیش کمار کی طرح ہی این ڈی اے کے امیدوار حمایت کرنے کا من بنا رہی ہے ، جس کے بعد کانگریس صدر سونیا گاندھی نے اپنی پارٹی کے رہنماؤں غلام نبی آزاد اور احمد پٹیل کو پوار سے ملاقات کرنے کے لئے بھیجا۔ بائیں بازو کےلیڈر سیتا رام یچوری، جو اپوزیشن کی جانب سے امیدوار کھڑا کئے جانے پر زور دے رہے ہیں ، انہوں نے نے بھی شرد پوار سے ملاقات کی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز