ووی پیٹ پرچی کو ای وی ایم سے ملانے کے معاملہ میں کانگریس کو جھٹکا ، سپریم کورٹ نے خارج کی اپیل

سپریم کورٹ نے ووٹر ویری فائبل پیپرآڈٹ ٹریل (وی وی پیٹ )مشینوں سے نکلی کم سے کم 25فیصد پرچیوں کو الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں (ای وی ایم)سے ملانے سے متعلق گانگریس کی عرضی آج خارج کردی۔

Dec 15, 2017 05:49 PM IST | Updated on: Dec 15, 2017 05:49 PM IST

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے ووٹر ویری فائبل پیپرآڈٹ ٹریل (وی وی پیٹ )مشینوں سے نکلی کم سے کم 25فیصد پرچیوں کو الیکٹرانک ووٹنگ مشینوں (ای وی ایم)سے ملانے سے متعلق گانگریس کی عرضی آج خارج کردی۔ عدالت عظمی نے اس معاملہ مین کوئی بھی ہدایت دینے سے انکار کردیا۔عدالت نے کہا کہ وہ انتخابی کمیشن کے دائرہ اختیار میں مداخلت نہیں کرسکتی ۔جمہوریت میں انتخابی عمل انتہائی اہم ہے اور صرف ایک پارٹی کے شک کو دور کرنے کے لئے اس میں مداخلت نہیں کی جاسکتی ۔

عدالت نے کہا کہ اگر گجرات کانگریس انتخابی عمل میں اصلاحات کے تعلق سے عرضی داخل کرتی ہے تووہ اس پر سماعت کرنے کو تیار ہے ۔ کانگریس نے اس سلسلہ میں سپریم کورٹ میں ایک عرضی داخل کی تھی ۔عرضی میں کہا گیا تھا کہ ای وی ایم سے جوووٹ ڈالے گئے ہیں انھیں ووی پیٹ مشینوں سے نکلنے والی پرچیوں سے ملایا جائے ۔واضح رہے کہ گجرات اسمبلی انتخابات کے دوسرے مرحلے کی پولنگ ختم ہونے کے بعد ٹیلی ویژن چینلوں پر دکھائے گئے ایگزٹ پول کے مطابق ریاست میں ایک بار پھر بی جے پی کی حکومت بننے کا امکان ہے ۔

ووی پیٹ پرچی کو ای وی ایم سے ملانے کے معاملہ میں کانگریس کو جھٹکا ، سپریم کورٹ نے خارج کی اپیل

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز