دہرادون: گلستاں انصاری اپنا گھر چلانے کے لئے چلا رہی ہیں ای رکشہ

دہرہ دون۔ دہرادون کی گلستاں انصاری اپنے گھر کی روزہ مرہ کی ضروریات کی تکمیل کے لئے ای رکشہ چلاتی ہیں۔

Feb 03, 2018 07:48 PM IST | Updated on: Feb 03, 2018 07:49 PM IST

 دہرہ دون۔  دہرادون کی گلستاں انصاری اپنے گھر کی روزہ مرہ کی ضروریات کی تکمیل کے لئے ای رکشہ چلاتی ہیں۔ عام طور پر مسلم خواتین پر گھرکی دہلیز پار کرنے پر پابندی ہوتی ہے لیکن دہرادون میں رہنے والی گلستاں انصاری اپنا اور اپنے گھر والوں کا پیٹ پالنے کے لئے گھر کی دہلیز پار کر کے ای رکشہ چلا کر عزم اور حوصلے کی ایک نئی مثال پیش کر رہی ہیں ۔

 رات کے اندھیرے میں ہاتھوں میں ای رکشہ کا ہینڈل تھامے گلستاں انصاری کوجو بھی دیکھتا ہے، وہ ان کی ہمت اور جذبے کو سلام کرتا ہے۔ گھر میں معاشی حالات کی تنگی نے گلستاں کو اس قدر مجبور کر دیا کہ 6 بہنوں میں سب سے چھوٹی گلستاں نے خاندان کے اخراجات کی ذمہ داری خود اٹھانے کا فیصلہ کر لیا اور آج دہرہ دون کی سڑکوں پر گلستاں انصاری ایک چلتی پھرتی مثال بن گئی ہیں۔

دہرادون: گلستاں انصاری اپنا گھر چلانے کے لئے چلا رہی ہیں ای رکشہ

رات کے اندھیرے میں ہاتھوں میں ای رکشہ کا ہینڈل تھامے گلستاں انصاری کوجو بھی دیکھتا ہے، وہ ان کی ہمت اور جذبے کو سلام کرتا ہے۔

 حالانکہ  گلستاں کے لئے ای رکشہ چلانے کا فیصلہ آسان ہرگز نہیں تھا لیکن جب نیت بلند اور حوصلہ مضبوط ہو تو پھر ہر مشکل کو آسان بنایا جا سکتا ہے ۔ یہی وجہ ہے کہ آج  گلستاں انصاری کڑاکے کے موسم سرما کی رات میں بھی شہر کی تمام سڑکوں پر سواریوں کا انتظار کرتی مل جاتی ہیں۔ لوگ ان کی ہمت سے اتنے متاثر ہیں کہ اب خود فون کرکے بھی ان کے رکشہ کی بکنگ کرتے ہیں ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز