رات بھر بے چین رہا رام رحیم، صرف آدھی روٹی کھائی، مل سکتا ہے باغبانی کا کام

Aug 29, 2017 11:53 AM IST | Updated on: Aug 29, 2017 12:00 PM IST

نئی دہلی۔ سادھوی جنسی استحصال معاملہ میں مجرم قرار گرمیت رام رحیم کو کورٹ کے ذریعہ 20 سال کی سزا سنائی گئی۔ سزا کے بعد پیر کی رات اس نے جیل میں گزاری۔ وہاں وہ قیدی نمبر 8647 کے طور پر ہے۔ نیوز 18 انڈیا کی رپورٹ کے مطابق، رات میں اسے کھانے میں چار روٹیاں ملیں، لیکن اس نے ایک نوالہ کھا کر چھوڑ دیا۔

رپورٹ کے مطابق، وہ کافی دیر تک کھانے کو دیکھتا رہا۔ اس کے بعد بھوک نہیں ہے کہہ کر کھانا لوٹا دیا۔ وہ رات بھر کمرے کے اندر بے چین رہا اور سو نہیں سکا۔

رات بھر بے چین رہا رام رحیم، صرف آدھی روٹی کھائی، مل سکتا ہے باغبانی کا کام

گرمیت رام رحیم

جیل کے اندر رام رحیم کو ایک فارم دیا گیا۔ اس میں اس سے پوچھا گیا کہ وہ وہاں کون سا کام کرے گا۔ اس کے لئے اسے باغبانی کا کام اور فیکٹری کے اندر کسی دوسرے کام میں سے ایک کام اختیار کرنے کے لئے کہا گیا۔

کورٹ میں کی تھی شکایت

بتا دیں کہ اس سے پہلے رام رحیم نے کورٹ میں جیل کے کھانے کی شکایت بھی کی تھی۔ اپنے ڈیرے میں لذیذ کھانا کھانے والے رام رحیم نے سی بی آئی کے خصوصی جج سے اچھا کھانا دینے کی مانگ کی۔ بابا نے جیل کے کھانے کی شکایت کرتے ہوئے کہا کہ یہاں کا کھانا بیحد خراب ہے جسے وہ نہیں کھا پا رہا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز