حامد انصاری نے پرجوش اور شاعرانہ انداز میں راجیہ سبھا کو 'الوداع' کہا

Aug 10, 2017 03:55 PM IST | Updated on: Aug 10, 2017 03:55 PM IST

نئی دہلی۔ راجیہ سبھا کے چیئرمین ڈاکٹر حامد انصاری نے پرجوش اور شاعرانہ انداز میں آج ایوان کو الوداع کہتے ہوئے تعاون، احترام اور اعتماد کے لئے ایوان کے لیڈر، حزب اختلاف کے رہنما، تمام جماعتوں کے اہم لیڈروں اور تمام ارکان کا شکریہ ادا کیا۔ مسٹر حامد انصاری نے ایوان میں منعقدہ الوداعی تقریب میں دو گھنٹے کی تقریروں کے بعد اپنے خطاب میں کہاکہ "آؤ چلیں کہ اب افسانہ ختم ہوتا ہے، عاشقی بھی ختم ہوتی ......" ۔ انہوں نے اپنے دس سال کی مدت کار میں تعاون، احترام اور اعتماد کے لئے ایوان کے رہنماؤں، اپوزیشن کے لیڈروں ، سیاسی پارٹیوں کے رہنماؤں اور تمام ارکان کا شکریہ ادا کیا ۔ انہوں نے راجیہ سبھا کے جنرل سکریٹری شمشیر کے شریف اور دیگر عملے سے بھی اظہار تشکر کیا۔

چیئرمین نے اپنی تقریر کے آخر میں "جے ہند" کہا اور اپنے مقام پر کھڑے ہوکر دونوں ہاتھ جوڑ کر حاضرین کو ہیلو کہا۔ مکمل ایوان ان کے اعزاز میں کھڑا ہو گیا۔ اس کے بعد مسٹر حامد انصاری اپنے کمرے کی طرف جانے لگے تو ایوان کے زیادہ تر ممبران ان کے پیچھے چلتے نظر آئے۔  مسٹر حامد انصاری نے ا پنے پیشرو تمام چیئرمین ، خاص طورپر سروپلی رادھا کرشنن کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ جمہوریت کی مضبوطی کے لئے اپوزیشن کو اپنی بات رکھنے کا اور مخالفت کرنے کا موقع دیا جانا چاہئے لیکن اپوزیشن کو بھی کام کاج میں رکاوٹ ڈالنے کی نیت سے مخالفت کا طریقہ نہیں اپنانا چاہیے۔ انهوں نے کہا کہ چیئرمین کے طور پر ان کا کام فٹبال، کرکٹ یا هاكي میچ میں ریفری کی طرح تھا، جہاں ہر فریق دوسرے فریق کا موقف لینے کا الزام لگاتا ہے۔انہوں نے ایک شعر پڑھتے ہوئے کہا کہ "مجھ پر الزام اتنے لگے کہ بے گناہی کے انداز بدل گئے"۔

حامد انصاری نے پرجوش اور شاعرانہ انداز میں راجیہ سبھا کو 'الوداع' کہا

نائب صدر حامد انصاری: فائل فوٹو

انهوں نے کہا کہ راجیہ سبھا کا وجود ہی ہندوستان کے تنوع کی عکاسی کرتا ہے اور قانون میں جلد بازی پر تحمل برتنے کے لئے آمادہ کرتا ہے۔ اس سے پہلے ڈپٹی چیئرمین پی جے کورین، وزیر اعظم نریندر مودی، ایوان کے لیڈر ارون جیٹلی، حزب اختلاف کے رہنما غلام نبی آزاد، سابق وزیر اعظم منموهن سنگھ، کانگریس کے کرن سنگھ اور سماج وادی پارٹی کے رام گوپال یادو اور کمیونسٹ پارٹی کے ڈي़ راجہ سمیت کئی اراکین نے مسٹر حامد انصاری کا پرتپاک خیرمقدم کرتے ہوئے الوداعی تقریب سے خطاب کیا۔ تمام اراکین نے چیئرمین کی مدت کو شاندار اور ان کے طریقہ کار کو ایک مثالی نمونہ قرار دیا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز