ایکشن میں یوگی آدتیہ ناتھ، 24 گھنٹے میں الہ آباد میں دو مذبح سیل

Mar 21, 2017 09:16 AM IST | Updated on: Mar 21, 2017 09:16 AM IST

لکھنئو۔ یوپی میں آدتیہ ناتھ یوگی کے وزیر اعلی کے عہدے کا حلف لینے کے 24 گھنٹے کے اندر ہی یوگی حکومت نے بی جے پی کے سنکلپ پتر کے وعدوں کو پورا کرنا شروع کرا دیا ہے۔ وہیں پیر کو الہ آباد نگر نگم نے کارروائی کرتے ہوئے 2 غیر قانونی مذبح کو بند کرنے کی کارروائی کی۔ بتا دیں کہ بی جے پی نے یوپی انتخابی مہم کے دوران وعدہ کیا تھا کہ بی جے پی کی حکومت بنتے ہی صوبے کے تمام سلاٹر ہاؤس بند کر دیے جائیں گے جس کے تحت الہ آباد کے كریلی میں ایک مذبح کے ساتھ ایک اور سلاٹر ہاوس کو بھی بند کر دیا گیا ہے۔ یوپی میں کل 38 سلاٹر ہاؤس ہیں۔

کیا ہوتا ہے غیر قانونی مذبح

ایکشن میں یوگی آدتیہ ناتھ، 24 گھنٹے میں الہ آباد میں دو مذبح سیل

مذبح دو قسم سے غیر قانونی ہوتے ہیں۔ پہلا جب مذبح کے بننے کے عمل میں قانون سے چھیڑ چھاڑ ہوئی ہو۔ دوسرا جب مذبح میں گایوں کو بھی کاٹنا شروع کر دیا جاتا ہے۔

واضح رہے کہ اتوار کو آدتیہ ناتھ یوگی کو اتر پردیش کے 21 ویں وزیر اعلی کے طور پر لکھنؤ کے کانشی رام یادگاری مقام پر گورنر رام نائیک نے عہدے اور رازداری کا حلف دلایا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز