یوگی حکومت کی قرض معافی یا مذاق! کسی کے 10 تو کسی کے 38 روپے ہوئے معاف

شانتی دیوی جس نے فصل بوائی کے نام پر بینک سے 1 لاکھ روپے کا قرض لیا تھا، لیکن اسے جو قرض معافی کا سرٹیفکیٹ دیا گیا ہے، اس میں 10.36 روپے کا قرض معاف ہے۔

Sep 12, 2017 06:15 PM IST | Updated on: Sep 12, 2017 06:34 PM IST

لکھنئو۔ ویسے تو یوگی حکومت کی فصل قرض معافی کی منصوبہ بندی کے تحت، چھوٹے اوراوسط درجے کے کسانوں کے ایک لاکھ روپے کی حد تک قرض معاف ہونے ہیں۔ لیکن یوپی کے حمیر پور ضلع میں پیر کے روز کسانوں کے ساتھ ایک بھونڈا مذاق کیا گیا۔ فصل قرض معافی کی منصوبہ بندی کے تحت کئی کسانوں کو 10 روپے، 38 روپے، 221 روپے اور 4000 روپے کی قرض معافی کا سرٹیفکیٹ دیا گیا۔ حکومت کے اس مذاق سے کسانوں میں بہت غم وغصہ اور نفرت ہے۔

پیر کے روز حمیرپور ضلع کے انچارج وزیر منو کوری خود اپنے ہاتھوں سے کسانوں کو قرض معافی کے سرٹیفکیٹ دینے کے لئے پہنچے لیکن جب کچھ کسانوں کو سرٹیفکیٹ دیا گیا تو وہ اسے دیکھ کر مایوس ہوگئے۔

Loading...

شانتی دیوی جس نے فصل بوائی کے نام پر بینک سے 1 لاکھ روپے کا قرض لیا تھا، لیکن اسے جو قرض معافی کا سرٹیفکیٹ دیا گیا ہے، اس میں 10.36 روپے کا قرض معاف ہے۔ ایک دوسرے کسان یونس خان، جس نے 60 ہزار روپے بیج اور کھاد کے لئے قرض لیا تھا، اسے جو قرض معافی کا سرٹیفیکٹ سونپا گیا، اس میں محض 38 روپے کی قرض معافی کی گئی ہے۔ یہی حال کئی اور کسانوں کا ہے جو ایک لاکھ روپئے تک کی قرض معافی کی امید میں یہاں آئے تھے۔

farmer-loan-waiver1

حمیر پور ضلع ہیڈکوارٹر کے پریڈ گراؤنڈ میں آج کسانوں کی قرض معافی کے سرٹیفکیٹ دینے کے لئے پروگرام منعقد کیا گیا تھا۔ اس پروگرام میں بی جے پی کے کئی رہنما سمیت انچارج وزیر منو کوری نے سرٹیفیکیٹ تقسیم کئے۔

اس سرٹیفکیٹ میں 10 روپے سے لے کر 4 ہزار روپے کی قرض معافی کی رقم درج تھی۔ یہ رقم کسانوں کے قرض سے کئی گنا کم تھی۔ اسی وجہ سے یہ کسان یوگی سرکار کے اس منصوبہ سے خود کو ٹھگا ہوا محسوس کر رہے ہیں۔

farmer-loan-waiver2

غور طلب ہے کہ اتر پردیش کا علاقہ بندیل کھنڈ پچھلے کئی سالوں سے قحط سالی کی زد میں ہے۔ یہی وجہ ہے کہ قرض کے بوجھ تلے ڈوبے سینکڑوں کسان اب تک خودکشی کر چکے ہیں۔ ایسے میں یوگی حکومت نے جب قرض معافی کا اعلان کیا تو یہاں کے کسانوں کے لئے یہ کسی نعمت سے کم نہیں تھی۔ یہاں کسان موسم کی مار سے اپنی ساری فصلوں کے ساتھ ساتھ اپنی جمع پونجی بھی گنوا چکے ہیں۔

farmer-loan-waiver3

وہیں، انچارج وزیر نے کہا کہ ہو سکتا ہے کہ غلطی سے چھپ گیا ہو۔ اس کی تحقیقات کرائی جائے گی اور مجرموں کو بخشا نہیں جائے گا۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز