یومِ آزادی قومی ایکتا سے منائیں: فرحت علی خاں

جامعہ اردو میں پرچم کشائی نامور ناول نگار بابائے ادب پدم شری پروفیسر قاضی عبدالستار اور پروفیسر طارق چھتاری کے دستِ مبارک سے ہوئی ۔

Aug 17, 2017 07:56 PM IST | Updated on: Aug 17, 2017 07:56 PM IST

علی گڑھ ۔ ہمیں نہ صرف اپنی آزادی کو برقرار رکھنا ہے بلکہ اس کے غلط استعمال سے بھی بچنا ہے۔ آزادی کا مطلب یہ نہیں کہ ہم دوسروں کی آزادی چھین لیں ۔ ان خیالات کا اظہار یومِ آزادی پر پرچم کشائی کے بعد جامعہ اردو کے افسر بکارِ خاص فرحت علی خاں نے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ آزادی ہم  نے آسانی سے حاصل نہیں کی ہے بلکہ اس کے لئے ہمارے آباو اجداد نے بے شمار قربانیاں دی ہیں۔

جامعہ اردو میں پرچم کشائی نامور ناول نگار بابائے ادب پدم شری پروفیسر قاضی عبدالستار اور پروفیسر طارق چھتاری کے دستِ مبارک سے ہوئی ۔ پروفیسر قاضی عبدالستار نے کہا کہ آزادی کے بعد کچھ موقعہ پرست اور فرقہ پرست سیاست دانوں نے ہندوستانیوں کے بیچ نفرت کی دیوار کھڑی کردی ۔انہوں نے مزید کہا کہ 1857 سے 1947تک ہندوستان کی جنگِ آزادی اردو کے بغیر ممکن نہیں تھی اور آزادی میں اردو زبان کا ایک اہم کردار رہا ہے ۔مہمانِ ذی وقار جناب طارق چھتاری نے ہندوستانی سماج کو گنگا جمنی تہذیب بتاتے ہوئے یہ مثال دی کہ ایک ہی باغ میں ایک طرح کے پھول وہ خوبصورتی پیدا نہیں کرتے جو مختلف طرح کے پھول ایک باغ میں کرتے ہیں اور یہی ہندوستان کی خوبصورتی ہے۔

یومِ آزادی قومی ایکتا سے منائیں: فرحت علی خاں

شیخ الجامعہ ، جامعہ اردو علی گڑھ مصاعد قدوائی نے مہمانوں کا خیر مقدم کیا اور کہا کہ آزادی کی جدوجہد سے لے کر ملک کی تعمیر و ترقی تک مسلمانوں کا کردار نمایاں رہا ہے ۔مگر آج وہ لوگ جن کا تعاون ملک کی آزادی میں صفر رہا ہے وہ آج ہم پر سوال اُٹھا رہے ہیں۔ انہوں نے ایک شعر بھی پڑھا ۔

وطن پر جان دے دیتے ہیں جب بھی وقت پڑتا ہے

وطن سے پیار کی جھوٹی نمائش ہم نہیں کرتے

اس موقعہ پر جامعہ اردو کے شیخ الجامعہ مصاعد قدوائی کی کتاب ’’دینِ کامل‘‘ کا رسم اجراء بابائے ادب پروفیسر قاضی عبدالستار اور پروفیسر طارق چھتاری کے دست مبارک سے ہوا۔آخر میں جامعہ پبلک اسکول کی جانب سے ایک رنگا رنگ ثقافتی پروگرام بھی پیش کیا گیا ۔یوم آزادی کی اس تقریب میں یونیورسٹی اور علی گڑھ کے معزز حضرات شامل ہوئے جن میں رضوان علی خاں ، قدیر ملک، نثار احمد ، ڈاکٹر خلیل چودھری ، ورشارانی،انجم قدوائی، ثمین معراج، فرید احمد، محمد ناصر، اقبال سیفی وغیرہ خاص خاص تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز