پاکستان کے ساتھ مسئلہ کشمیر پرکسی بھی طرح کی ثالثی کو ہندوستان نے کیا مسترد

Jun 22, 2017 08:26 PM IST | Updated on: Jun 22, 2017 08:50 PM IST

نئی دہلی: ہندستان نے آج کشمیر کے تنازعے پرہند پاک مذاکرات شروع کرانے کے لئے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انٹونیو گيوٹرس طرف سے کسی بھی طرح کی پہل کو مسترد کر دیا۔ وزارت خارجہ کے ترجمان گوپال باگلے نے اس حوالے سے سوالوں کے جواب میں کہا کہ ’’باہمی معاملات باہمی طور پر حل کئے جائیں گے‘‘۔نامہ نگاروں نے ان سے یہ پوچھا تھا کہ کیا اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے ہندستان اور پاکستان کے درمیان ثالثی کر نا چاہتے ہیں! انہوں نے کہا کہ"ہندستان کا اس مسئلے پر موقف بالکل واضح ہے کہ دو طرفہ مسائل کو حل دو طرفہ بات چیت سے ہی کیا جا سکتا ہے اور یہ بات اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کو بھی پتہ ہے۔ "

مسٹر گيوٹرس سے ان کی اولین پریس کانفرنس میں ایک نامہ نگار نے جب اس تنازعہ کو حل کرنے میں ان کے رول کی بابت دریافت کیا تو مسٹر گيوٹرس نے جواب میں کچھ اس طرح کا سوالیہ جملہ ادا کیاتھا کہ ’’آپ یہ کیوں سمجھتے ہیں کہ میں نے پاکستانی وزیر اعظم سے تین بار اور ہندستان کے وزیر اعظم سے دو مرتبہ ہی ملاقات کی ۔۔۔اس کا تعلق صرف تعداد ملاقات سے ہے ‘‘۔

پاکستان کے ساتھ مسئلہ کشمیر پرکسی بھی طرح  کی ثالثی کو ہندوستان نے کیا مسترد

file photo pti

ترجمان نے بتا یا کہ مسٹر گيوٹرس نے کہا تھا کہ وہ مسٹر مودی اور مسٹر شریف سے مل چکے ہیں، انہوں نے قطعیت کے ساتھ یہ نہیں کہاتھا کہ وہ کشمیر کے معاملے پر دونوں ہمسایوں میں بات چیت شروع کرانے کی پہل کر رہے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز