اردو میں لکھی آر ٹی آئی کا لوک سبھا سکریٹری نے نہیں دیا جواب ، مرکزی اطلاعات کمیشن نے جاری کیا نوٹس

May 24, 2017 11:25 PM IST | Updated on: May 24, 2017 11:25 PM IST

الہ آباد : اردو میں لکھی آرٹی آئی درخواست کا جواب نہ دئے جانے پر مرکزی اطلاع کمیشن نے لوک سبھا سکریٹری سے جواب طلب کرلیا ہے ۔ لوک سبھا کے کام کاج اورعوامی شکایت کے تعلق سے لکھی گئی اردو آر ٹی آئی کی درخواست کا جواب گزشتہ چاربرسوں میں نہیں دیا گیا ہے ۔ اردو کے حقوق کے لئے کام کرنے والی تنظیم ’’ اردو ڈیولپمنٹ آرگنائزیشن ‘‘ نے لوک سبھا سکریٹری کو اردو میں لکھی کئی درخواستیں ارسال کی تھیں ، لیکن ان کی طرف سے ایک بھی درخواست کا جواب نہیں دیا گیا ۔

اردو کے قانونی حقوق کے لئے کام کرنے والی سرکردہ تنظیم ’’ اردو ڈیولپمنٹ آرگنا زیشن ‘‘ نے سات برس پہلے لوک سبھا کو اردو میں درخواست دی تھی عوامی شکایات کے تصفیے کے لئے اس نے کیا طریقہ کار اختیار کیا ہے؟ لیکن لوک سبھا نے ان کی اردو درخواست کا کوئی جواب نہیں دیا ۔ تنظیم نے 2013 میں اردو میں ایک اور درخواست دے کر اپنے سوالات کو دہرایا ، لیکن لو ک سبھا سکریٹری کی طرف سے اس کا بھی کوئی جواب نہیں دیا گیا ۔

اردو میں لکھی آر ٹی آئی کا لوک سبھا سکریٹری نے نہیں دیا جواب ، مرکزی اطلاعات کمیشن نے جاری کیا نوٹس

اردو ڈیو لپمنٹ آرگنا ئزیشن نے ماضی میں بھی کئی بڑی کامیابیاں حاصل کی ہیں ۔ تنظیم اردو میں بھرے ہوے چیک اور انکم ٹیکس ریٹرن ( آئی ٹی آر) کو بھی منظور کرانے میں کامیاب رہی ہے ۔ اس معاملہ میں بھی تنظیم نے ہار نہیں مانی ۔ اردو میں جواب نہ ملنے کے بعد تنظیم نے آر ٹی آئی کے تحت ہندی میں کئی درخواستیں لوک سبھا سکریٹری کو ارسال کیں ، لیکن لوک سبھا سکریٹری کی طرف سے جو جواب دیا گیا وہ نہ صرف ناکافی ہے بلکہ کئی وزارتوں کی طرف رخ موڑ کر اس کو مزید پیچیدہ بنانے کی کوشش کی گئی ۔

تنظیم کی شکایت کے بعداب اس معاملہ میں مر کزی اطلاع کمیشن نے لوک سبھا سکریٹری سے جواب طلب کیا ہے۔ مرکزی اطلاع کمیشن نے لوک سبھا سے پوچھا ہے کہ اس نے تنظیم کی طرف سے مانگی گئی معلومات کو ابھی تک کیوں نہیں فراہم کیا ہے ۔ تنظیم کوامید ہے کہ مرکزی اطلاع کمیشن کی مداخلت کے بعد پارلیمنٹ میں اردو کے استعمال کے تعلق سے کئی اہم معلومات نکل کر سامنے آئیں گی ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز