آئی پی ایس افسر ہمانشو کمار کو یوگی حکومت کے خلاف ٹویٹ کرنا مہنگا پڑا، معطل

Mar 25, 2017 02:00 PM IST | Updated on: Mar 25, 2017 02:02 PM IST

لکھنؤ: اترپردیش حکومت کے خلاف ٹوئٹر پر تبصرہ کرنے والے انڈین پولیس سروس (آئی پی ایس) کے افسر ہمانشو کمار کو آج معطل کر دیا گیا۔ بتایا جا رہا ہے کہ ہمانشو گزشتہ 15 دنوں سے کسی اطلاع کے بغیر ڈیوٹی سے غائب تھے۔ انہوں نے ریاست میں بی جے پی حکومت آتے ہی کئے گئے ٹرانسفر پر سوال اٹھائے تھے۔

ہمانشو کمار نے حال میں ہی یوگی راج میں یادو نام والے افسروں کو نشانہ بنائے جانے اور ان کا ٹرانسفر کئے جانے کا الزام لگایا تھا۔ہمانشو نے ٹویٹ کر کے کہا تھا کہ 'سینئر افسروں میں یادو نام والے پولیس افسرون کو معطل کرنے یا ریزرو لائن بھیجنے کے لئے ہوڑ مچی ہوئی ہے۔

آئی پی ایس افسر ہمانشو کمار کو یوگی حکومت کے خلاف ٹویٹ کرنا مہنگا پڑا، معطل

معطلی پر ہمانشو کمار نے پہلا تبصرہ کرتے ہوئے ٹویٹر پر کرتے ہوئے لکھا ہے کہ 'فتح صرف سچ کی ہی ہوتی ہے۔پولیس ذرائع کے مطابق مسٹر کمار اس وقت پولیس ڈائریکٹوریٹ سے منسلک تھے۔ انہیں معطل کرکے اس سلسلے میں جانچ کرنے کا حکم جاری کیا گیا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز