شمالی کشمیر میں جیش محمد کا آپریشنل چیف خالد مسلح تصادم میں ہلاک

Oct 09, 2017 05:30 PM IST | Updated on: Oct 09, 2017 05:30 PM IST

سری نگر۔ شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں پیر کو ہونے والے ایک مختصر مسلح تصادم میں پاکستان سے تعلق رکھنے والی جنگجو تنظیم جیش محمد کے آپریشنل سربراہ خالد بھائی کو ہلاک کر دیا گیا ۔ کشمیر رینج کے انسپکٹر جنرل آف پولیس (آئی جی پی) منیر احمد خان نے یو این آئی کو بتایا کہ جنگجوؤں کی نقل وحرکت سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر بارہمولہ کے لدورہ نامی گاؤں میں ایک چیک پوائنٹ قائم کیا گیا تھا۔ انہوں نے بتایا ’چیک پوائنٹ پر جب ایک جنگجو کو روکا گیا تو اس نے فرار ہونے کے لئے پولیس پارٹی کی طرف ہینڈ گرینیڈ پھینکا‘۔ منیر خان نے بتایا ’خوش قسمتی سے یہ گرینیڈ پھٹنے سے رہ گیا۔ اس کے بعد جنگجو نے اپنی پستول سے فائرنگ کرکے ایک رہائشی مکان میں پناہ لے لی‘۔

انہوں نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز نے اپنی جوابی کاروائی میں مذکورہ جنگجو کو ہلاک کر دیا۔ آئی جی پی نے کہا ’مارے گئے جنگجو کی شناخت جیش محمد کے آپریشنل چیف خالد بھائی ساکنہ پاکستان کے بطور کی گئی ہے‘۔ ریاستی پولیس نے اپنے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ پر کہا کہ انہیں جیش محمد کے پاکستانی جنگجو کی نقل وحرکت کی مصدقہ اطلاع ملی تھی۔

شمالی کشمیر میں جیش محمد کا آپریشنل چیف خالد مسلح تصادم میں ہلاک

انہوں نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز نے اپنی جوابی کاروائی میں مذکورہ جنگجو کو ہلاک کر دیا۔ آئی جی پی نے کہا ’مارے گئے جنگجو کی شناخت جیش محمد کے آپریشنل چیف خالد بھائی ساکنہ پاکستان کے بطور کی گئی ہے‘۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز