مساجد و مدارس پر وزارت داخلہ کی تجاویز مسلمانان کشمیر کو ہراساں کرنے کی منصوبہ بندی: جمعیت اہلحدیث

Feb 28, 2017 07:09 PM IST | Updated on: Feb 28, 2017 07:09 PM IST

سری نگر۔ جمعیت اہلحدیث جموں وکشمیر نے کہا ہے کہ مسا جد و مدارس کے حوا لہ سے وزارت دا خلہ کی تجا ویزاسلامیان ریاست کو مزید ہرا ساں و پریشان کرنے کی منصو بہ بندی کا صا ف عندیہ دیتی ہیں۔ یہ اطلا عا ت بہت ہی تشویشناک ہیں۔ خیال رہے کہ وزارت داخلہ نے وادئ کشمیر کی موجودہ صورتحال کے حوالے سے تیار کردہ ایک جائزہ رپورٹ میں مساجدو مدرسوں کو کنٹرول کرنے کی تجاویز پیش کی ہیں۔ جمعیت اہلحدیث کے ایک ترجمان نے یہاں جاری ایک بیان میں کہا کہ گوکہ اس سے پہلے بھی یہ خا لص دینی مرا کز نشانے پر رہے ہیں لیکن اب اس کی تشہیر کر کے مسلما نو ں کو مزید ذہنی کرب و اضطراب میں مبتلا کر نے کی سو چ کو ہی پر وا ن چڑھا یا جا رہا ہے۔

بیا ن میں کہا گیا ہے ’اسلام ایک حیات آ فرین اور روح افزا ء پیام ہے اور اس کا پیام محبت و مروت اور نظام عدل و انصا ف ساری دنیا کے لئے یکسا ں ہے۔ تاریخ کی آنکھوں نے اس کی رو ح پر ور تعلیما ت کی بنیاد پر ایک ایسے معا شرے کی تعمیر دیکھ لی ہے جہا ں جا ن کے دشمنوں کو بھی امان نا مے دیے گئے اور اپنے غیر کی کسی تمیز کے بغیر انصا ف کی فرا ہمی کو یقینی بنا یا گیا‘۔ جمعیت اہلحدیث کے بیا ن میں وزا رت دا خلہ کی متذکرہ تجا ویز پر عمل آوری سے گریز کی اپیل کی گئی ہے اور اس بات کو واضح کیا گیا ہے کہ مساجد و مدارس ہی امن کا گہوارہ ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے ’یہاں سے دنیا کو امن ، سکون، یکجہتی، انسان دوستی اور عدل و انصاف کا پیغام دیا جاتا ہے اور ان کے گرد شک کا شکنجہ کسنا کسی طور درست اقدام نہیں۔ اس طرح کے اقدامات لوگوں میں بے چینی کو فروغ دیں گے جو کسی بھی طرح کسی کے فائدے میں نہیں ۔

مساجد و مدارس پر وزارت داخلہ کی تجاویز مسلمانان کشمیر کو ہراساں کرنے کی منصوبہ بندی: جمعیت اہلحدیث

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز