کشمیر : قاضی گنڈ میں پولیس عہدیدار کی آن ڈیوٹی ڈاکٹر کو دھمکی ، ویڈیو وائرل ، پولیس محکمہ کی معذرت

Dec 22, 2017 05:51 PM IST | Updated on: Dec 22, 2017 05:51 PM IST

سری نگر: سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی ہے جس میں جنوبی کشمیر کے ضلع کولگام کے قاضی گنڈ میں ایک پولیس عہدیدار کو ایک آن ڈیوٹی ڈاکٹر کو دھمکیاں دیتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔ تاہم ریاستی پولیس نے واقعہ پر معذرت ظاہر کرتے ہوئے مناسب کاروائی کی یقین دہانی کرائی ہے۔ جنوبی کشمیر کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل آف پولیس (ڈی آئی جی) ایس پی پانی نے ایک ٹویٹ میں کہا ’ہم قاضی میں کل پیش آنے والے واقعہ پر معذرت کا اظہار اور معاملے کی مناسب کاروائی کی یقین دہانی کرتے ہیں‘۔

ایک رپورٹ کے مطابق دھمکیاں دینے کے مرتکب پولیس عہدیدار کو ڈی آئی جی کے سامنے حاضر ہونے کے لئے کہا گیا ہے۔ رپورٹوں کے مطابق ڈی ایس پی رینک کے ایک پولیس عہدیدار نے جمعرات کو قاضی گنڈ میں واقع ٹراما اینڈ ایمرجنسی اسپتال میں ڈیوٹی پر مامور ڈاکٹر نصیر کو دھمکیاں دیں۔ مذکورہ پولیس عہدیدار کسی سڑک حادثے کے کیس کے سلسلے میں ڈاکٹر سے ملنے آیا تھا، تاہم دونوں کے درمیان توتو میں میں شروع ہوئی جس دوران مذکورہ پولیس عہدیدار نے ڈاکٹر کو دھمکیاں دے دیں۔

کشمیر :  قاضی گنڈ میں پولیس عہدیدار کی آن ڈیوٹی ڈاکٹر کو دھمکی ، ویڈیو وائرل ، پولیس محکمہ کی معذرت

اس واقعہ کی ویڈیو سماجی رابطوں کی ویب سائٹس فیس بک اور ٹویٹر کے علاوہ پیغام رسانی کی ایپلی کیشن وٹس ایپ پر وائرل ہوگئی ہے۔ ویڈیو میں پولیس عہدیدار کو ڈاکٹر سے مخاطب ہوکر یہ کہتے ہوئے سنا جاسکتا ہے’ تیرے کو میں دیکھ لوں گا۔ آج رات کو دیکھ لوں گا۔ یہاں سے ہی گھسیٹے ہوئے لے جاؤں گا ۔ تیرے سے بات کرنے آیا تھا، بات کر ٹھیک سے۔ تم نے ڈر ابھی تک دیکھا نہیں ہے‘۔ تاہم ڈاکٹر کو بے خوف ہوکر یہ کہتے ہوئے سنا جاسکتا ہے’میں نے ڈر دیکھے ہیں۔ گولی مارنی ہے تو مارو گولی۔ آپ کو گولی چلانی آتی ہے‘۔ وائرل ہونے والی یہ ویڈیو قدرے دھندلی ہے جس سے لگتا ہے کہ یہ شام کے وقت بنائی گئی ہے۔ ڈاکٹرس ایسوسی ایشنوں نے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز