جموں و کشمیر : اننت ناگ میں فوج کی فائرنگ میں زخمی معمر شہری محمد عبداللہ کی موت

Jul 18, 2017 10:17 PM IST | Updated on: Jul 18, 2017 10:17 PM IST

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں سیکورٹی فورسز کی مظاہرین پر مبینہ فائرنگ کے نتیجے میں زخمی ہونے والا 60 سالہ معمر شہری اسپتال میں دم توڑ گیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا ’ضلع اننت ناگ کے بج بہاڑہ میں پیر کے روز سیکورٹی فورسز کی مبینہ فائرنگ میں زخمی ہونے والے معمر شہری محمد عبداللہ گنائی ساکنہ حسن پورہ منگل کی شام کو شیر کشمیر انسٹی چیوٹ آف میڈیکل سائنسز میں دم توڑ گیا‘۔

انہوں نے بتایا کہ محمد عبداللہ کو پہلے سری نگر کے برزلہ علاقہ میں واقع ہڈیوں و جوڑوں کے اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔ رپورٹ کے مطابق قصبہ بج بہاڑہ میں پیر کے روز فوجی اہلکاروں اور ایک مقامی اسکوٹی سوار کے درمیان گرم گفتاری ہوئی۔

جموں و کشمیر : اننت ناگ میں فوج کی فائرنگ میں زخمی معمر شہری محمد عبداللہ کی موت

file photo

تاہم جب فوجیوں نے اسکوٹی سوار کو پیٹنا شروع کردیا تو لوگ اس کو بچانے کے لئے سامنے آئے اور فوج کے خلاف احتجاج کرنے لگے۔ اس دوران محمد عبداللہ گنائی اُس وقت گولی لگنے سے شدید زخمی ہوگیا جب فوجیوں نے مبینہ طور پر احتجاجیوں کو منتشر کرنے کے لئے اپنی بندوقوں کے دھانے کھول دیے۔ ایک رپورٹ کے مطابق معمر شہری کی ہلاکت کی خبر پھیلنے کے ساتھ بج بہاڑہ کے کچھ علاقوں میں فوج کے خلاف احتجاج مظاہرے شروع ہوگئے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز